ننکانہ، شاہ کوٹ، فیصل آباد اور وزیر آباد میں 2 خواتین، 2 کمسن بچوں، ایک بچی سے زیادتی

11 مارچ 2014

شاہکوٹ+ ننکانہ صاحب+ فیصل آباد+ وزیر آباد (نامہ نگاران+ نمائندہ خصوصی) شاہ کوٹ، ننکانہ، فیصل آباد اور وزیر آباد میں 2 خواتین، 2 کمسن بچوں اور ایک بچی کو زیادتی کا نشانہ بنا دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق شاہ کوٹ سٹی کے علاقہ شادمان ٹاؤن میں 9 سالہ لڑکے محسن نے محلے کی ایک 5 سالہ بچی رابعہ کو مبینہ طور پر زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ کمسن بچی کے والدین تھانہ سٹی پولیس شاہ کوٹ کے اے ایس آئی مہدی بھٹی کے ہمراہ برائے ڈاکٹر ملاحظہ ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال ننکانہ صاحب پہنچ گئے۔ ننکانہ صاحب میں شادی شدہ خاتون سے اوباش کی زیادتی، باپ کی درخواست پر مقدمہ درج کرلیا گیا۔ تھانہ صدر ننکانہ صاحب کے گائوں چک وٹواں کے ملزم خرم شہزاد ولد محمد بوٹا اپنے ہی گائوں کی رہائشی شادی شدہ خاتون(ک) کے گھر میں گزشہ رات زبردستی گھس گیا اور اسلحہ کی نوک پر شادی شدہ خاتون کو اپنی شیطانی ہوس کا نشانہ بنا ڈالا۔ زیادتی کا نشانہ بننے والی خاتون کی چیخ و پکار سن کر اہل خانہ جاگ اٹھے جس پر ملزم جان سے ماردینے کی دھمکیاں دیتے ہوئے وہاں سے فرار ہوگیا۔ پولیس تھانہ صدر ننکانہ صاحب نے عقیل ساجد کی مدعیت میں ملزم کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔فیصل آباد میں تھانہ ترکھانی کے علاقہ چک 223/ گ۔ب کے رہائشی جاوید اقبال کی اہلیہ (ف) گھر پر موجود تھی، اسی دروازہ پر دستک ہوئی جب اس نے دروازہ کھولا تو وہاں موجود تین نامعلوم مسلح افراد اسے زبردستی اغوا کر کے نامعلوم مقام پر لے گئے جہاں اسے مبینہ طور پر زیادتی کا نشانہ بناتے رہے۔ ملت ٹائون کے علاقہ 196/ ر۔ب گھونہ غربی کا رہائشی حارث قوم مسیح عمر ساڑھے چار سال جو گلی میں کھیل رہا تھا رضوان عرف مانا ولد  وارث 196/ ر۔ب گھونہ غربی ورغلاکر قریبی مکان میں لے گیا۔ وزیر آباد میں نواحی گائوں علی نگر کے محمد ارشد کا 6 سالہ کمسن بیٹا گھر کے باہر کھیل رہا تھا موقع پا کر افتخار اسے اٹھا کر قریب واقع محمد آصف کے ڈیرہ پر لے گیا اور زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ بچے کی گمشدگی پر اہل خانہ کو تشویش ہوئی تو تلاش شروع کردی گئی اور جب ورثا گائوں کے قریب محمد آصف کے ڈیرہ پر پہنچے تو معصوم بچے کی چیخ و پکار سنائی دی۔