لاپتہ ملائشین طیارے کا معمہ حل نہ ہو سکا، ملبہ ملنے کی اطلاعات جھوٹ نکلیں

11 مارچ 2014

کوالالمپور (این این آئی) ملائیشیا کی قومی فضائی کمپنی ملائیشیا ایئر لائن کے سربراہ نے مسافر طیارے کے لاپتہ ہونے کومعمہ قرار دیا ہے۔میڈیا رپورٹ کے مطابق اظہرالدین عبدالرّحمن نے کہا کہ حکام نے طیارے کے اغوا ہونے کے خدشے کو خارج از امکان نہیں قرار دیا۔اظہرالدین عبدالرّحمن نے کہا کہ ویتنام کے جنوب میں سمندر میں دیکھے گئے ملبے کے بارے میں اطلاعات کی تصدیق نہیں ہو سکی ہے۔ملائیشیا کی سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ڈائریکٹر اظہر الدین عبدالرحمان کے مطابق طیارے میں دو ایسے مسافر بھی سوار تھے جن کے پاسپورٹ جعلی تھے۔ ہمارے پاس ان مسافروں کے سی سی ٹی وی فوٹیج موجود ہیں، جنہیں مزید تفتیش میں استعمال کیا جا رہا ہے ۔ ادھر انٹرپول کے سیکرٹری جنرل رونالڈ نوبل نے ایک بیان میں کہا کہ طیارہ کے لاپتہ ہونے اور پاسپورٹ چوری ہونے کا آپس میں کوئی تعلق ہونے کے بارے میں تشویش کرنا قبل از وقت ہے تاہم یہ بات قابل تشویش ہے کہ دو مسافر چوری شدہ پاسپورٹ استعمال کرتے ہوئے بین الاقوامی سفر کیلئے طیارے میں سوار ہونے میں کامیاب ہوگئے اور یہ پاسپورٹ ایسے ہیں جن کا اندراج انٹرپول کی فہرست میں شامل ہے۔