شمالی وزیرستان  دہشتگردوں کی فائرنگ سے کیپٹن شہید

پاک افواج کے شعبہ تعلقات عامہ(آئی ایس پی آر) کے مطابق شمالی وزیرستان میں سکیورٹی فورسز اور دہشت گردوں کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ ہوا۔ سکیورٹی فورسز کے دستوں نے دہشت گردوں کے ٹھکانے کو موثر انداز میں نشانہ بنایا۔ فائرنگ کے شدید تبادلے میں کیپٹن محمد اسامہ بن ارشد  نے بہادری سے لڑتے ہوئے اپنی جان کی لازوال قربانی دی اور شہادت کو گلے لگا لیا۔آئی ایس پی آر کے مطابق مطابق علاقے میں کسی بھی دہشت گردی کے خاتمے کے لیے سینی ٹائزیشن اپریشن کیا جا رہا ہے۔ پاکستان کی سکیورٹی فورسز ملک سے دہشت گردی کی لعنت کے خاتمے کیلئے پرعزم ہیں اور ہمارے بہادر جوانوں کی ایسی قربانیاں ہمارے عزم کو مزید مضبوط کرتی ہیں۔
اس میں کوئی شک نہیں کہ پاکستان میں ہونیوالی دہشت گردی کے تانے بانے ہمارے ازلی دشمن بھارت اور اسکے مربی افغانستان سے ہی ملتے ہیں۔ نیشنل ایکشن پلان کے تحت کئے جانے والے اپریشن کے باوجود پاکستان میں موجود ان دونوں ملکوں کے تربیت یافتہ دہشت گرد اور سہولت کار دہشت گردی کی کارروائیاں کرنے میں کامیاب ہو رہے ہیں جبکہ عساکر پاکستان طویل عرصے سے پوری جانفشانی سے دہشت گردوں کیخلاف برسرپیکار ہیں اور دہشت گردی کے مکمل خاتمے کیلئے پرعزم بھی ہیں۔ دہشت گردی سے باز رکھنے اور افغانستان کو مسکت جواب دینے کیلئے چند ماہ قبل افغانستان میں موجود دہشت گردوں کے ٹھکانوں کو بھی نشانہ بنایا جا چکا ہے مگر افغانستان اس سے سبق سیکھے بغیر اب بھی اپنی سرزمین پاکستان کیخلاف استعمال ہونے دے رہا ہے اور دہشت گردی کیلئے پاکستان میں موجود اپنے ایجنٹوں اور سہولت کاروں کی بھرپور معاونت بھی کررہا ہے۔ دہشت گردی کی ان وارداتوں سے یہی عندیہ ملتا ہے کہ ہمارے سکیورٹی سسٹم میں کہیں نہ کہیں سقم ضرور موجود ہے جس سے فائدہ اٹھا کر دہشت گرد اپنے اہداف تک پہنچنے میں آسانی سے کامیاب ہو رہے ہیں۔ پاکستان کی سلامتی کیخلاف بھارت اور افغانستان کا اپنا مخصوص ایجنڈا ہے مگر ہمیں ملکی دفاع اور سلامتی کے تمام تقاضے بغیر کسی ردّ و کدّ کے پورے کرنا ہونگے۔ اس کیلئے ضروری ہے کہ ردالفساد‘ ضرب عضب اور کومنگ اپریشن کی طرح اپریشن عزم استحکام کو بھی موثر بنایا جائے تاکہ ملک میں موجود دہشت گردوں کی باقیات اور انکے سہولت کاروں کا مکمل صفایا کیا جا سکے۔

ای پیپر دی نیشن

دوریزیدیت کو ہمیشہ زوال ہے

سانحہ کربلا حق اور فرعونیت کے درمیان ااس کشمکش کا نام ہے جس کا نتیجہ یہ نکلتا ہے کہ بالآخر فتح حق کی ہوتی ہے امام حسین کا نام ...