سیکنڈری سکولز کے نصاب میں ٹیکنیکل کورسز شامل کرنے کا فیصلہ

11 جولائی 2015

لاہور (اپنے نامہ نگار سے) حکومت پنجاب گرﺅتھ سٹریٹجی 2018کے تحت نوجوانوں کو جدید ہنر فراہم کر کے باعزت روزگار کی فراہمی اور صنعتی پیداوار میں اضافے کے لیے سیکنڈری سکولز کے نصاب میں ٹیکنکل کورسز شامل کرنے کے لیے روڈ میپ کو حتمی شکل دے رہی ہے۔ ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر محنت و انسانی وسائل راجہ اشفاق سرور نے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ صوبائی وزیر خزانہ عائشہ غوث پاشا ،وزیر صنعت چوہدری شفیق ،زکواة و عشر ملک ندیم کامران ، چیئر مین پی اینڈ ڈی عرفان الہی ، سیکرٹری لیبر عشرت علی ،سیکرٹری ایگری کلچر، چیئرمین ٹیوٹا عرفان قیصر شیخ ،چیف آپریٹنگ آفیسر پنجاب سکلڈ ڈویلپمنٹ فنڈاکبر بوسن، ایم ڈی پنجاب ووکیشنل ٹریننگ کونسل ساجد نصیر کے علاوہ ورلڈ بنک ، پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ اور دیگر متعلقہ اداروں کے نمائندوں نے اجلاس میں شرکت کی - شرکاءنے تربیتی اداروں کی بہتری کے لئے مختلف تجاویز اور سفارشات پیش کیں۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ مختلف سٹیک ہولڈرز کی سفارشات کی روشنی میں ٹیکنیکل ٹریننگ اداروں کے لیے ایپکس باڈی کا قیام عمل میں لائے جانے کی تجویز ہے۔ راجہ اشفاق سرور نے کہا کہ پرائیویٹ سیکٹر کے ساتھ پارٹنرشپ کے تحت ایک ایسا نظام واضع کیا جائے گا جس کے ذریعے اگلے چار سال میں 20 لاکھ نوجوانوں پر مشتمل ہنر مند افرادی قوت کی تشکیل ممکن بنائی جائے۔ وزیر صنعت چوہدری شفیق نے کہا کہ پاکستانی ہنرمند افراد کی کھپت میں اضافے کے لئے سکلڈ ڈویلپمنٹ سیکٹوریل پلان 2015-18 متعارف کروایا گیا۔