لوڈشیڈنگ جاری‘ نماز جمعہ کے دوران بھی بجلی بند‘ لوگوں کو پریشانی

11 جولائی 2015

لاہور (نامہ نگاران) بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ کا سلسلہ گزشتہ روز بھی جاری رہا جس پر لوگ سراپا احتجاج بنے رہے جبکہ کاروبار ٹھپ ہوکر رہ گئے، کئی علاقوں میں پانی کی بھی شدید قلت رہی۔ سحر و افطار اور نماز تراویح کے دوران بھی بجلی کی بندش سے روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا رہا جبکہ جمعہ کی نماز کے دوران بھی لوڈشیڈنگ سے لوگوں کو شدید مشکلات اور پریشانی کا سامنا رہا۔ ڈونگہ بونگہ سے نامہ نگار کے مطابق شہر اور گردو نواح میں سحری و افطاری اور نماز تراویح کے اوقات کے دوران بجلی کی کئی کئی گھنٹے لوڈشیڈنگ اور شدید گرمی سے لوگ نڈھال ہوگئے جبکہ روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا رہا۔ چک امرو سے نامہ نگار کے مطابق 18 گھنٹوں کی لوڈشیڈنگ سے روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا رہا جبکہ کاروبار زندگی درہم برہم ہوکر رہ گیا۔ قلعہ دیدار سنگھ سے نامہ نگار کے مطابق شہر اور گردو نواح میں 16 سے 18 گھنٹے لوڈ شیڈنگ عوام بلبلا اٹھے۔ جمعتہ المبارک کے روز بھی لوڈشیڈنگ کی وجہ سے مساجد میں وضو کیلئے پانی ختم ہوگیا۔ ہسپتالوں میں مریضوں کی حالت ابتر ہوگئی، کئی آپریشن نہ ہوسکے۔ گوجرانوالہ سے نمائندہ خصوصی کے مطابق غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ کاسلسلہ جوں کا توں رہا، کئی علاقوںمیں سحر و افطار‘ تراویح کے اوقات میںہونے والی بندش کے خلاف شہریوں نے احتجاج کیا ہے۔ شہر اورگردو نواح میں گیپکو کی طرف سے غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ کاسلسلہ کنٹرول نہیںہوسکا ہے سحر و افطار‘ تراویح اور دیگر اوقات میں ہونے والی دو دو‘ تین تین گھنٹوں کی لوڈشیڈنگ کیخلاف کئی علاقوں میں شہریوں نے شدیداحتجاج کیا جبکہ خواتین کی بڑی تعداد گیپکو اور متعلقہ حکام کو بددعائیں دیتی رہی۔ نارنگ منڈی سے نامہ نگار کے مطابق شہر اور گرد و نواح میںبجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ نے سینکڑوں نمازیوں کو نماز جمعہ سے محروم کردیا۔ دن بھر بجلی کی لوڈشیڈنگ سے لوگ وضو کےلئے پانی کی بوند بوند کو ترستے رہے شہریوں نے حکومت کےخلاف شدیداحتجاج کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت رمضان المبارک میں بھی اپنے وعدوںکی پاسداری نہ کرسکی جبکہ سحر اورافطار کے اوقات میں بھی لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری رہا۔
لوڈشیڈنگ جاری