پیپلز پارٹی حقیقی اپوزیشن بنے ورنہ منہ دکھانے کے قابل نہیں رہے گی: فردوس عاشق

11 جولائی 2015

اسلام آباد(آن لائن) پیپلز پارٹی کی سینئر رہنما و سابق وفاقی وزیر فردوس عاشق اعوان نے سپریم کورٹ سے اپیل کی ہے کہ نیب کی جانب سے سیاستدانوں کیخلاف کرپشن کیسز کی دی گئی فہرست میں سے ا ن کے کیس کی جلد سماعت کی جائے تاکہ قوم کو حقائق معلوم ہوسکیں۔ نیشنل پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے فردوس عاشق اعوان نے کہا گزشتہ دنوں سپریم کورٹ میں نیب زدگان کی لسٹ دی گئی جس میں میرا نام ایک کیس کے حوالے سے شامل کیا گیا۔ میں نے سیالکوٹ میں اپنے دور حکومت میں ایک فلاحی منصوبے کیلئے خواتین کیلئے شیٹل سروس کیلئے بسیں دی تھیں اب نیب کی جانب سے کیس تیار کرکے انکوائری کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جب تک احتساب کرنے والا ادارہ خود مختار نہیں ہوگا تو کس طرح سے کرپشن روکی جاسکتی ہے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے بتایا کہ وفاقی وزیر پانی و بجلی کے حکم پر ڈی سی او سیالکوٹ نے خواتین شٹل سروس کے لیے فراہم کی گئی بسوں کو پکڑ کر ڈی سی آفس گراﺅنڈ میںکھڑا کردیا ہے انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے میرا استعفیٰ قبول نہیں کیا پارٹی کے اندر رہ کر جنگ لڑوں گی پیپلز پارٹی جب تک نواز لیگ کے ساتھ سیاسی دوستی ختم کرکے حقیقی اپوزیشن کا رول ادا نہیں کرتی اس وقت تک عوام کو منہ دکھانے کے قابل نہیں رہے گی انہوں نے کہا کہ کراچی میں رینجرز کا آپریشن جاری رہنا چاہیے۔
فردوس عاشق اعوان