سردار قیوم روحانیت میں گہرا شغف رکھتے چلہ کشی بھی کرتے تھے، نوجوان ان کے جلسوں میں جیوے جیوے مرشد جیوے کے نعرے لگاتے تھے

11 جولائی 2015
سردار قیوم روحانیت میں گہرا شغف رکھتے چلہ کشی بھی کرتے تھے، نوجوان ان کے جلسوں میں جیوے جیوے مرشد جیوے کے نعرے لگاتے تھے

راولپنڈی (نوائے وقت رپورٹ) مجاہد اول سردار محمد عبدالقیوم خان کے انتقال کے وقت ان کے صاحبزادے سردار عتیق احمد خان ہسپتال میں موجود تھے۔ سردار قیوم کا جسد خاکی ہسپتال سے ان کے مرشد خانہ کاکا جی ہاوس (خانقاہ ڈفرہ شریف) لے جایا گیا جہاں سردار عتیق، عثمان عتیق اور بیٹوں نے غسل دیا۔ سردار قیوم کاکاجی ہاوس میں کئی سال اقامت پذیر رہے۔ سردار قیوم روحانیت میں گہرا شغف رکھنے کے باعث چلہ کشی بھی کیا کرتے تھے۔ سردار قیوم درویش صفت سیاستدان کی شہرت رکھتے تھے اور ان کے جلسے میں ایم ایس ایف کے نوجوان جیوے جیوے مرشد جیوے کے نعرے لگاتے تھے۔