ڈی ایچ اے میں آب رسانی کا مربوط نظام

11 جولائی 2015

ناصر رضا
آکسیجن کے بغیر زندگی ممکن نہیں یہی اہمیت پانی کی ہے۔ پانی اللہ تعالیٰ کی عظیم نعمت ہے جہاںپانی ہوگا وہاں زندگی ہوگی جہاں زندگی ہو گی وہاں پانی ضرور ہوگا۔ اشرف المخلوقات انسان کے ساتھ ساتھ پانی، حیوانات اور نباتات کیلئے بھی اہم ہے۔ معاشرتی زندگی میں بستیاں بسانے کے ساتھ ساتھ آب رسانی صرف ایک ضرورت ایک فرض ہی نہیں بلکہ اب آرٹ اور سائنس کا درجہ رکھتا ہے۔ تازہ صاف و شفاف پانی ہر ذی روح کیلئے بہت ضروری ہے۔
لاہور کی خوبصورت ترین رہائشی سوسائٹی ڈیفنس ہاؤسنگ اتھارٹی کے نام سے جانی و پہچانی جاتی ہے جہاں آب رسانی کا انتہائی مربوط اور موثر نظام موجود ہے جو ڈیفنس ہاؤسنگ اتھارٹی لاہور کے فیز ایک سے فیز چار تک کے بارہ ہزار بہتر رہائشی و کمرشل یونٹس اور قریباً ایک لاکھ سے زیادہ افراد کی ضروریات کو پورا کرتا ہے۔ اس نظام میںمجموعی طور (23) ٹیوب ویل شامل ہیں جن میں سے(17) ٹیوب ویل کی صلاحیت دو کیوسک ہے تیرہ(13) اوور ہیڈ واٹر ٹینک ہیں جن سے ہر ایک کی صلاحیت ایک لاکھ گیلن اور پچاس ہزار گیلن ذخیرہ صلاحیت کے چار (4) ٹینک موجود ہیں جبکہ 2008ء سے 2015ء کے درمیانی عرصہ میں ایک کیوسک صلاحیت کے چھ (6) ٹیوب ویل براہ راست پانی پمپ کرنے کیلئے لگائے گئے ہیں۔
صارفین کی ضروریات کو پورا کرنے کیلئے تمام ٹیوب ویل اٹھارہ (18) گھنٹے روزانہ سے زاید عرصہ کیلئے چلائے جاتے ہیں۔
موسم گرما میں صارفین کی پانی کی ضروریات نسبتاً زیادہ بڑھ جاتی ہیں جبکہ بجلی کی زیادہ کھپت کے باعث لوڈشیڈنگ کا احتمال رہتا ہے لہٰذا اس مشکل پر قابو پانے کیلئے ڈی ایچ اے لاہور کے پاس چھ (6) جنریٹر موجود ہیں جبکہ ضروریات کو پورا کرنے کیلئے ہر سال نو (9) جنریٹر کرائے پر حاصل کر کے ٹیوب ویلز کے ساتھ لگا دیئے جاتے ہیں تا کہ کسی بھی وقت کسی بھی قسم کی لوڈشیڈنگ کی صورت میں تمام ٹیوب ویل بلا تعطل کام جاری رکھ سکیں اور ڈی ایچ اے کے صارفین کو کسی بھی موقع پر پریشانی کا سامنا نہ کرنا پڑے۔ یہ جنریٹر 150 KVA صلاحیت کے ہوتے ہیں جو بلا رکے اپنا کام جاری رکھ سکتے ہیں۔
ہم مشینی دور میں رہ رہے ہیں ہر آنے والے دن کے ساتھ مشینوں پر ہمارا انحصار بڑھ رہا ہے، مشینں چلیں گی تو کبھی کبھار خراب بھی ہونگی انھیں مرمت بھی درکار ہوگی اور اس میں کچھ وقت بھی درکار ہوتا ہے جسکے سبب آب رسانی میں خلل پڑ سکتا ہے۔ ایسی صورت میں مشینی خلل کو دُور کرنے کیلئے ماہر انجینئر اور کارکنوں کی ایک ٹیم ہمہ وقت تیار رہتی ہے جو کسی بھی خرابی کی اطلاع پاکر فوراً اپنا کام شروع کر دیتی ہے اور کوشش کی جاتی ہے کہ کسی بھی قسم کے خلل کو کم سے کم وقت میں دُور کر کے آب رسانی کو رواں کر دیا جائے۔
صارفین کی ضروریات اور آب رسانی کی صورتحال کا جائزہ لینے کیلئے گھر گھر جاکر سروے کرنے کا نظام بھی موجود ہے جسکے سبب زمینی حقائق جاننے میں مدد ملتی ہے اور صارفین سے براہ راست معلومات حاصل کی جاتی ہیں۔
اس حوالے سے جاری سال میں تازہ ترین سروے کے مطابق اٹھاسی (88%) فیصدصارفین نے ڈی ایچ اے لاہور کے نظام آب رسانی کو سراہا جبکہ کہیں کہیںشکایات بھی پائی گئیں۔ شکایات کا جائزہ لینے پر علم میں آیا کہ بعض اوقات صارفین کی طرف سے اُن ہدایات پر عمل نہیں کیا گیا جو پانی ذخیرہ کرنے کیلئے وقتاً فوقتاً صارفین کے علم میں لائی جاتی ہیں۔
ڈی ایچ اے لاہور کے ہر رہائشی یونٹ کیلئے ضروری ہے کہ اس میں زیر زمین پانی کا ایک بڑا ٹینک موجود ہو اسی طرح رہائشی یونٹ کی چھت پر پانی ذخیرہ کرنے کیلئے پانی کی ٹینکی کا ہونا ضروری ہے۔ زیر زمین پانی کے ٹینک سے موٹر کے ذریعے پانی چھت پر موجود ٹینکی میں پہنچایا جاتا ہے جہاں سے پورے گھر میں پانی پہنچتا ہے۔ کبھی کبھی غفلت کے سبب موٹر نہیں چلائی جاتی جسکے سبب زیر زمین ٹینک سے پانی چھت پر موجود ٹینکی میں نہیں پہنچتا اور دشواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ اس کام میں باقاعدگی اور احتیاط سے پانی کی کمی جیسے مسلئے سے محفوظ رہا جا سکتا ہے۔ مزید برآں پانی کوضائع ہونے سے بچانے کیلئے بھی بعض احتیاطیں ضروری ہیں جن میں سب سے اہم یہ ہے کہ استعمال کے بعد پانی کی ٹونٹیوں کو موثر طور پر بندکیاجائے تاکہ پانی ضائع نہ ہو۔ بعض گھروں میں زیر زمین واٹر ٹینک تعمیر نہیں کیا گیا جسکے سبب پانی کا ذخیرہ کم رہتا ہے اس کی موجودگی میں پانی کی کمی کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔
ڈی ایچ اے لاہور میں آب رسانی کے نظام کی خوبصورتی یہ ہے کہ یہ نظام مکمل طور پر مربوط ہے لہٰذا ایک علاقے میں اگر کسی وجہ سے ٹیوب ویل خراب ہو جائے تو اس سے آب رسانی کا کام نہیں رکتا بلکہ قریب ہی موجود دوسرے ٹیوب ویل سے پانی کی ترسیل جاری رہتی ہے جبکہ خرابی کو جلد از جلد دور کرنا ڈی ایچ اے کے عملے کی ہمیشہ سے منزل رہی ہے اسکے ساتھ ساتھ بدلتے وقت کے بدلتے تقاضوں کو پورا کرنے کیلئے ڈی ایچ اے لاہور کا عملہ ہمہ وقت مصرف رہتا ہے۔
لاہور کی اس خوبصورت ہاؤسنگ سوسائٹی میں رہائشی اور کمرشل یونٹس تک پانی پہنچانے کے ساتھ ساتھ مختلف گرین بیلٹس اور پارکوں کی سیرابی بھی ایک اہم اور کٹھن کام ہے۔ چہار جانب پھیلی ہریالی اور خوبصورتی سے آراستہ مختلف پارک ڈی ایچ اے لاہور کے عملے کی محنت کا منہ بولتا ثبوت ہیں جسکے سبب رہائشی کا لونیوں میں ڈی ایچ اے لاہور رہائش کیلئے شہریوں کی اول ترجیح ہے۔
ڈی ایچ اے لاہور واٹر منیجمنٹ سسٹم کا جائزہ لینے سے ایک بات واضح ہوتی ہے کہ ڈی ایچ اے لاہور کی طرف سے کمیونٹی کو بلا تعطل آب رسانی کا منصوبہ ایک شاندار کاوش ہے جو کسی بھی دوسری پرائیویٹ ہاؤسنگ سوسائٹی کیلئے قابل تقلید ہے۔