پاکستان میڈیکل اینڈ ڈیٹنل کونسل کا اجلاس ، نصاب میں اصلاحات کرنے کا فیصلہ

11 فروری 2018

اسلام آباد(خصوصی نمائندہ)پاکستان میڈیکل اینڈ ڈیٹنل کونسل (پی ایم اینڈ ڈی سی )کے صدرسابق جج سپریم کورٹ جسٹس میاں شاکراللہ جان کی سربراہی میں ہونے والے پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل کی ایڈہاک کمیٹی کے 160ویں اجلاس میں نصاب سے متعلق اصلاحات کا فیصلہ کیا گیا۔ پروفیسر ڈاکٹر ارشد جاوید، وی سی ، کے ایم یو پشاورنے اپنی پریذنٹیشن میںنصاب کوڈبلیوایف ایم ای ، ایل سی ایف ایم ای اورای سی ایف ایم جی کے عالمی معیارات کے مطابق لانے کی ضرورت پر زوردیا۔ماضی میں اس قسم کے کئی اقدامات اٹھانے کے باوجود پی ایم اینڈ ڈی سی نصاب پر نظرثانی کے عمل کومکمل نہ کرسکا۔اس موقع پر کونسل نے پاکستان کے نامورمیڈیکل ایجوکیشنسٹس کے علم اورتجربے سے فائدہ اٹھانے کامتفقہ فیصلہ کیا تاکہ ملکی ضروریات کے مطابق قابل ڈاکٹر ز کا مقصدحاصل ہوسکے۔ پاکستان میڈیکل اینڈ ڈینٹل کونسل کے صدرجسٹس میاں شاکراللہ جان (سابق جج، سپریم کورٹ آف پاکستان)نے ایک بیان میں کہاکہ نیانصاب طلبہ کے علم اورطبی صلاحیتوں کو اجاگرکرنے میں معاون ثابت ہوناچاہیے۔انہوں نے مزید کہا کہ یہ عمل مستقبل میں بہتراورقابل ڈاکٹرکے حصول میں اہم ثابت ہوگا۔یہ فیصلہ بھی کیاگیاکہ کونسل نئی میڈیکل/ ڈینٹل کالجزکی منظوری اورنگرانی کیلئے آئندہ کے لائحہ عمل کے تحت بہتراورنظرثانی شدہ پرفارمہ کے اقدامات بھی کرے گی۔ موجودہ گزٹ ریگولیشنز کے مطابق نظرثانی شدہ پرفارمہ شفاف اورمقصد پرپورااترتاہو۔