لودھراں میں جلسہ سے خطاب پر عمران خان سمیت4 ارکان اسمبلی کو نوٹس

11 فروری 2018

اسلام آباد(خصوصی نمائندہ) الیکشن کمیشن آف پاکستان نے لودھراں میں ضمنی انتخابات کے جلسہ سے خطاب پر تحریک انصاف کے چیرمین عمران خان سمیت چار اراکین قومی اسمبلی کونوٹسز جاری کردیئے۔ ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر این اے154 لودھراں میں جہانگیرترین کے بیٹے تحریک انصاف کے امیدوارعلی ترین کو طلب کرلیا ہے۔ ہفتہ کو ای سی پی سے جاری نوٹس میں کہا گیا ہے کہ احکامات کے باوجود جلسہ کرکے ضابطہ اخلاق کی سنگین خلاف ورزی کی گئی ہے۔جہانگیر ترین کی سپریم کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں نااہلی کے بعد خالی ہونے والی قومی اسمبلی کی نشست کے لیے ضمنی الیکشن کی مہم کے سلسلے میں ہونے والے جلسے میں عمران خان سمیت پارٹی کی سینیئر قیادت نے شرکت کی تھی۔ ضمنی انتخاب میں جہانگیر ترین کے بیٹے علی ترین امید وار ہیں جن کو الیکشن کمیشن نے آج11فروری کو ضلعی الیکشن کمیشن میں پیش ہونے کا حکم دیا ہے۔ ای سی پی کی جانب سے اراکین قومی اسمبلی عمران خان شاہ محمود قریشی، شیخ رشیداحمد اور مراد سعید کی کی شرکت کا نوٹس لیا ہے۔ واضح رہے کہ ای سی پی نے عمران خان کو جلسے میں شرکت سے روکتے ہوئے کہا تھا کہ رکن اسمبلی ضمنی انتخاب کی مہم میں شرکت نہیں کرسکتا ہے تاہم عمران خان کے علاوہ شیخ رشید اور دیگر نے نہ صرف جلسے میں شرکت کی بلکہ حکومت سمیت مخالف سیاسی جماعتوں کے خلاف دھواں دھار تقاریر کیں۔قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 154 لودھراں میں ضمنی انتخاب کیلئے پولنگ (کل) پیر کو ہوگی۔ 4لاکھ31 ہزار ووٹرز10 امیدواروں میں سے بقیہ مدت کیلئے اپنے نمائندے کا انتخاب کریں گے۔ الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری تفصیلات کے مطابق حلقہ میں کل 338 پولنگ سٹیشن اور1043 پولنگ بوتھ قائم کئے گئے ہیں اس حلقہ میں مسلم لیگ(ن) کے امیدوار سید اقبال شاہ ، تحریک انصاف کے امیدوارعلی جہانگیر ترین اور پیپلزپارٹی کے امیدوار مرزا محمد علی بیگ کے درمیان مقابلہ ہوگا۔