توہین رسالت قانون میں تبدیلی کسی صورت برداشت نہیں کرینگے: مجلس تحفظ ختم نبوت

11 فروری 2018

ملتان (نامہ نگار خصوصی) عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے مرکزی ناظم تبلیغ مولانا محمد اسماعیل شجاع آبادی، مرکزی سیکرٹری اطلاعات مولانا عزیزالرحمن ثانی،پیررضوان نفیس، مبلغ ختم نبوت مولاناعبدالنعیم، مولانا خالد محمود،قاری عبدالعزیز ،مولانا سعیدوقا ودیگر علماء نے سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے ہیومن رائٹس کا توہین رسالت متعلق مجوزہ ترمیمی بل کا مسودہ پیش کرنے پر شدید احتجا ج کرتے ہوئے علماءنے کہا کہ قانون تحفظ ناموس رسالت کیخلاف بیرونی دباﺅ اوراندرونی سازشوں کو ناکام بنایا جائے گا ،توہین رسالت کے مرتکب کی سزا آئین کے اندر جو طے ہے اسے تبدیل کرنے کا قانون کسی بھی قیمت پر قبول نہیں کرینگے۔حکومت نے حالیہ بحران سے کوئی سبق حاصل نہیں کیااگر توہین رسالت کے قانون کوتبدیل یا ترمیم وتنسیخ کرنے کوشش کی گئی تواسلامیان پاکستان اسے کسی صورت بھی برداشت نہیں کرینگے۔علماءنے کہا کہ آئین پاکستان میں توہین رسالت کے مرتکب کی سزا متعین ہے قانون میں تبدیلی تو درکنار اس تبدیلی کا سوچھا بھی گیا امت مسلمہ اسکو کبھی بھی برداشت نہیں کرے گی۔علماءکرام نے وطن عزیز پاکستان میں منکرین ختم نبوت فتنہ قادیانیت کی بڑھتی ہوئی اسلام و آئین پاکستان مخالف سرگرمیوں پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ قادیانیوں کی اسلام و ملک دشمن سرگرمیاں روکی جائیں۔
تحفظ ختم نبوت