وافر گیس حکومتی دعووں کی قلعی کھل گئی

11 فروری 2018

سلام آباد(آن لائن) آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی نے کہا ہے کہ ایل این جی درآمد سے ملک میں گیس کا بحران حل نہیں ہو گا جس سے پورے ملک میں گیس کی وافر مقدار میں فراہمی کے حکومتی دعووں کی قلعی کھل گئی ہے، اوگرا کی جانب سے جاری رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ اگلے 3سال تک گیس کی قلت 50فیصد تک رہے گی، جبکہ 2020ء تک گیس کا شارٹ فال 3ارب 99کروڑ کیوبک فٹ یومیہ اور 2030ء تک یہ شارٹ فال 6ارب 61کروڑ کیوبک فٹ یومیہ تک بڑھنے کا خدشہ ظاہر کیا گیا ہے، تفصیلات کے مطابق آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی نے اسٹیٹ آف ریگولیٹڈ پیٹرولیم انڈسٹری رپورٹ 2016-17جاری کر دی ہے جس میں پورے ملک میں وافر مقدار میں گیس کی فراہمی کے حکومتی دعوؤں کی قلعی کھل گئی ہے، اوگرا رپورٹ کے مطابق ایل این جی درآمد کرنے سے بھی گیس کا بحران حل نہیں ہو گا اور 3سال تک ملک میں گیس کی قلت 50فیصد تک رہے گی، جبکہ 2020تک گیس کا یومیہ شارٹ فال 3ارب 99کروڑ کیوبک فٹ اور 2030تک یہی شارٹ فال 6ارب 61کروڑ کیوبک فٹ تک بڑھنے کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔