مودی سرکار مذاکرات کیلئے تیار نہیں‘ مسئلہ کشمیر حل نہ ہونے کے نتائج خطرناک ہونگے: ناصر جنجوعہ

11 اپریل 2018

اسلام آباد (ایجنسیاں+ نوائے وقت رپورٹ) مشیر قومی سلامتی لیفٹیننٹ جنرل (ر) ناصر خان جنجوعہ کا کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کے زخم عالمی برادری کے دوہرے معیار کی نشاندہی کرتے ہیں، بھارت انسانی حقوق پرجواب کی بجائے شملہ معاہدے کے پیچھے چھپ رہا ہے، مسئلہ حل نہ ہوا تو خطرناک نتائج نکل سکتے ہیں۔ جنرل (ر) ناصر خان جنجوعہ نے یہ بات مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر سیمینار سے خطاب میں کہی۔ ناصر خان جنجوعہ نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر تقسیم ہند سے لے کر اب تک شعلوں کی لپیٹ میں ہے، بھارتی فوج مقبوضہ وادی میں خون کی ہولی کھیل رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ عالمی طاقتوں کے مفادات انسانی حقوق کو پس پشت ڈال رہے ہیں۔ مودی سرکار بات سننے کیلئے تیار ہے نہ ہی مذاکرات کرتے کیلئے تیار ہے۔ کشمیر کا حل دو ایٹمی طاقتوں کے درمیان امن کی کنجی بن سکتا ہے۔ ناصر جنجوعہ کی زیر صدارت اجلاس میں مدارس میں یکساں نصاب اور امتحانی نظام سے متعلق امور پر غور کیا گیا، مدارس کے طلباء کو قومی دھارے میں شامل کرنے سے متعلق سفارشات کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں مدارس کے طلباء کو قومی تعلیمی نظام میں شامل کرنے کے حوالے سے بریفنگ اور مدارس کے طلباء کو قومی دھارے میں شامل کرنے سے متعلق سفارشات کا جائزہ لیا گیا۔