اسلام آباد واقعہ: پاکستان، امریکہ کا سفارتکاروں کی نقل وحرکت محدود کرنے پر غور

11 اپریل 2018

اسلام آباد (شفقت علی + دی نیشن رپورٹ) اسلام آباد میں امریکی ملٹری اتاشی کی گاڑی کے نیچے آ کر نوجوان کی ہلاکت کے واقعہ کے بعد امریکہ اور پاکستان نے سفارتکاروں کی نقل وحرکت محدود کرنے پر غور شروع کر دیا ہے۔ رپورٹس کے مطابق توقع ہے واشنگٹن میں پاکستانی سفارتکاروں کو 25 میل سے زائد سفر کرنے پر حکومت سے اجازت لینا ہو گی۔ توقع ہے اطلاق یکم مئی سے ہوگا۔ اسلام آباد میں وزارت خارجہ کے سینئر عہدیداروں کا کہنا ہے کہ پاکستان بھی ایسا کرنے پر غور کر رہا ہے۔ امریکہ نے اس حوالے سے پاکستان کو باضابطہ طور پر آگاہ نہیں کیا۔ واضح رہے کہ چار اپریل کو امریکی سفارتی اہلکار کی گاڑی کی ٹکر سے نوجوان جاں بحق ہوگیا تھا جس کے بعد پاکستان نے امریکی سفارتی اہلکار کی مجرمانہ غفلت سے شہری کی موت کے حادثے پر احتجاج بھی کیا تھا۔پاکستان نے امریکی ملٹری اتاشی کی گاڑی کی ٹکر سے شہری کی موت پر احتجاج کرتے ہوئے امریکی سفیرکودفتر خارجہ طلب کیا تھا اور قانون پر عملدرآمد کا کہا تھا۔