لاہور ہائیکورٹ پیشی پر آئے پسند کی شادی کرنیوالے جوڑے کی لڑکی کے رشتہ داروں نے درگت بنا دی

11 اپریل 2018

لاہور (نامہ نگار)لاہورہائیکورٹ پیشی پر آنے والے پسند کی شادی کرنے والے جوڑے کی لڑکی کے ورثاء نے درگت بنا دی،پولیس کے موقع پر نہ پہنچنے کی وجہ سے لڑکی کے لواحقین لڑکے کو تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے اس کی بیوی کواغواء کر کے لے گئے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق مزنگ کے علاقہ میںہائی کورٹ کے باہر پیشی پر آنے والے عمران اور حمیرا بی بی نے ایک ماہ پہلے پسند کی شادی کی تھی جس کے گھر والوں نے پتوکی میں حمیرا بی بی کے اغواء کا مقدمہ درج کر ادیا تھا۔ اس سلسلے میں حمیرا بی بی لاہور ہائیکورٹ میںدفعہ 64کے بیان دینے کے لیے اپنے شوہر کے ساتھ آئی لیکن اس کے ورثاء جو کہ پہلے سے ہی وہاں گھاٹ لگا ئے بیٹھے تھے۔انہوں نے ہائی کورٹ میں داخل ہونے سے پہلے ہی میاں ،بیو ی کوپکڑ کرخوب تشدد کا نشانہ بنیا اور اور حمیرا کو زبردستی اپنے ساتھ لے گئے اتنی ہنگامہ آرائی کے باوجود مزنگ پولیس موقع پر نہ پہنچی جس کی وجہ سے عمران کو تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے سمیرا کے لواحقین اسے اپنے ساتھ لے کر فرار ہوگئے ۔