نواب ٹائون سینئر صحافی کے گھر چوری کی واردات کا سراغ نہ لگ سکا

11 اپریل 2018

لاہور (نامہ نگار) نواب ٹائون پولیس سینئر صحافی شہزاد جاوید کے گھر گزشتہ ہفتے ہونے والی چوری کے سلسلے میں کسی قسم کی پیش رفت کرنے میں ناکام رہی ہے جبکہ پولیس کی جانب سے چوری کی واردات کا سراغ لگائے جانے کی بجائے ابھی تک موقع کا معائنہ تک نہیں کیاگیا ہے۔ گزشتہ ہفتے سینئر صحافی شہزاد جاوید اپنی والدہ کے انتقال کی وجہ سے جوہر ٹائون میں واقع اپنے گھر پر موجود نہیں تھے۔ اس دوران نامعلوم چور ان کے گھر کے تالے توڑ کر تقریباً پونے دو لاکھ روپے مالیت کی اشیاء بشمول نقدی، یو پی ایس اور ایک دو طلائی انگوٹھی وغیرہ چرا کر لے گئے جس کی اطلاع نواب ٹائون پولیس کو کی گئی۔ ان کی درخواست اے ایس آئی عباد علی کو مارک کردی گئی۔ اس کے بعد انہوں نے دو دن مسلسل مذکورہ اے ایس آئی سے رابطہ کیا تو اس نے یہ کہہ کر معاملے کو التوا میں ڈال دیا کہ وہ اپنے گھر گیا ہوا ہے لہٰذا وہ واپس آتے ہی پہلی فرصت میں مدعی سے رابطہ کرے گا۔ اس معاملے میں پولیس کی تمام کوششیں مدعی سے صرف ایک بار ٹیلی فون رابطے تک ہی محدود رہی ہیں۔ مدعی نے اعلیٰ پولیس حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ چوروں کا سراغ لگا کر ان کے مسروقہ سامان کی برآمدگی کرائی جائے۔