چیئرمین نادرا کی تقرری کیخلاف درخواست قابل سماعت ہونے سے متعلق مزید دلائل طلب

11 اپریل 2018

لاہور (اپنے نامہ نگار سے) لاہور ہائی کورٹ نے چیئرمین نادرا کی تقرری اور توسیع کے خلاف دائردرخواست کے قابل سماعت ہونے سے متعلق مزید دلائل طلب کر لئے۔ درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ قوانین کے تحت نادرا کے عہدے پر طریقہ کار کے تحت تعلیم اور تجربے کے حامل شخص کو ہی تعینات کیا جا سکتا ہے، چئیرمین نادرا کی تعیناتی تین برس کے لئے ہی عمل میں لائی جا سکتی ہے۔، انہوں نے بتایا کہ موجودہ چئیرمین نادرا عثمان یوسف مبین کوعہدے کی معیاد ختم ہونے کے باوجود غیر قانونی طور پر سیاسی بنیادوں پرمزید تین برس کی توسیع دے دی گئی ہے، وزیر داخلہ احسن اقبال نے وزیراعظم پاکستان سے چیئرمین نادرا کی تین سال کے لیے توسیع کرائی،چیئرمین نادرا کا تقرر کرنابورڈ آف ڈائریکٹرز کااختیار ہے، انہوں نے استدعا کی کہ نادرا چئیرمین کی قانونی طریقہ کار کے برعکس تقرری اور توسیع کو کالعدم قرار دیا جائے۔