تحفظ

11 اپریل 2018

ظفر علی راجا
نشانہ ظلم کا بنتے ہیں ہر دن
ستم ہوتے ہیں ان پر روز کیا کیا
لبوں پر اک سوال اس قوم کے ہے
تحفظ کب یہاں بچوں کا ہو گا