سندھ حکومت نے ’’ای ہیلتھ منصوبے‘‘ کا اعلان کر دیا

11 اپریل 2018

کراچی (ہیلتھ رپورٹر) حکومت سندھ کے شعبہ صحت نے اسمارٹ فون پر مبنی صحت کی ایک ’’ایپلیکیشن طبی‘‘ کے صوبے بھر میں استعمال کا اعلان کر دیا ہے یہ ایپلیکیشن صحت عامہ کے تمام سرکاری اداروں میں استعمال کی جائے گی۔ اس ایپلیکیشن کے استعمال کے ذریعے ہیلتھ ورکرز صحت عامہ کی خدمات کے استعمال اور ان کی کارکردگی کے متعلق اعداد و شمار بروقت جمع کر سکیں گے اور امید ہے کہ اس کی بدولت کاغذی کارروائیوں پر مبنی نظام کا خاتمہ ہو گا اس بات کا اعلان سیکرٹری ہیلتھ ڈاکٹر فضل اللہ پیچوہو نے آغا خان یونیورسٹی (اے کے یو) میں منعقدہ ورکشاپ میں کیا۔ ورکشاپ کا انعقاد صوبے بھر میں فراہم کی جانے والی حفاظتی ٹیکوں کی خدمات کی اثر پذیری اور پائیداری میں اضافے کے اقدامات اور ان میں بہتری سے متعلق گفتگو کیلئے کیا گیا تھا۔ ڈاکٹر پیچوہو نے کہاکہ ’’ہم طبی‘‘ جیسے ایک اہم اقدام کا آغاز کر رہے ہیں تاکہ صوبے بھر میں تعینات صحت عامہ کے عملے کی کارکردگی کی نگرانی کو بہتر بنایا جا سکے انہوں نے مزید کہاکہ اس نئے نظام کی مدد سے ہم صحت کے حفاظتی پروگراموں‘ مریضوں کے ریفرل اور اسپتالوں کی کارکردگی کے متعلق اعداد و شمار مرتب کر پائیں گے اور اس کی بنیاد پر صوبے کے نظام صحت کی جانچ ہو سکے گی۔ آغا خان یونیورسٹی کی ڈاکٹر شہلا زیدی اور سلیم سیانی نے 2014ء سے 2016ء کے دوران سندھ حکومت اور آغا خان ڈویلپمنٹ نیٹ ورک کے ای ہیلتھ ریسورس سینٹر کے اشتراک سے متعارف کروایا تھا۔