ڈی این اے پر جلد بازی سے کام لیا، نظریہ کونسل سفارش روکے: طاہر اشرفی

10 جون 2013

اسلام آباد(اے پی اے) اسلامی نظریہ کونسل کے ممبر مولانا طاہر اشرفی نے کونسل کے سربراہ سے مطالبہ کیا ہے جنسی تشدد کے واقعات میں جنیاتی تجزیہ یعنی ڈی این اے سے متعلق کونسل کی متنازع سفارشات کو روکا جائے۔ اسلامی نظریہ کونسل نے حال ہی میں اپنی تجویز میں کہا ہے جنسی تشدد کے واقعات میں ڈی این اے معائنے کو بنیادی شہادت کے طور پر قبول نہیں کیا جاسکتا۔گزشتہ روز امریکی ریڈیو سے گفتگو کرتے ہوئے مولانا طاہراشرفی کا کہنا تھا کونسل نے اس معاملے میں جلد بازی سے کام لیا اور کسی بھی صورت میں عصمت دری کے واقعات میں ڈی این اے معائنے کو رد نہیں کیا جا سکتا۔ انہوں نے کہا ایک خط کے ذریعے کونسل کے چیئرمین مولانا محمد خان شیرانی سے کہا ہے وہ اس بارے مشاورتی عمل میں طبی ماہرین اور سول سوسائٹی کے نمائندوں کو شامل کریں۔