اوباشوں کی 2 کمسن لڑکیوں، طالب علم ، خاتون اور خواجہ سراسے زیادتی، متعدد گرفتار

Aug 10, 2018

ساہیوال سرگودھا/شیخوپورہ/ وہاڑی/ کنجوانی/ تاندلیانوالہ/جڑانوالہ (نامہ نگاران) مختلف مقامات پراوباشوں نے 2 کمسن لڑکیوں، طالب علم ، خاتون اور خواجہ سراسے زیادتی کرڈالی۔تفصیل کے مطابق تھانہ ستیانہ کے علاقہ بر لب نہر جڑانوالہ روڈ پر اوباش سالک نواحی علاقہ 89گ ب کی 4سالہ عروج فاطمہ کو اپنے گھر کے دروازے پر کھیلتے اٹھا کر جڑانوالہ روڈ کے ساتھ نہر پر لے جاکر زیادتی کر رہا تھاکہ بچی کی چیخ و پکار سن کر ارد گرد لوگوں نے جمع ہو کر اوباش کو گرفت میں لے کر تھانہ ستیانہ پولیس کو اطلاع دی۔ پولیس ستیانہ نے ملزم کو گرفتار کر لیا۔شیخوپورہ کے علاقہتھانہ مانانوالہ کے علاقہ لاگر میں بااثر زمیندارو ں نے خواجہ سراء کو حویلی میں لیجا کر رات بھر ڈانس کروانے کے بعد زیادتی کا نشانہ بناڈالا، مزاحمت پر شدید تشدد کیا اور جان سے مار دینے کی دھمکیاں دیتے رہے، ملزمان کے چنگل سے نکل کر خواجہ سراء تھانہ مانانوالہ پہنچ گیا، پولیس نے فوری دادرسی کی بجائے ملزمان کو تحفظ دینا شروع کردیا، متاثرہ خواجہ سراء کرن کے مطابق بااثر زمینداروں پپو اور مان وغیرہ نے اسے فنکشن کا بہانہ بنا کر ایک حویلی میں لیجا کر رات بھر ڈانس کروایا اور پھر مجھے یرغمال بنا کر زبردستی زیادتی کی جبکہ مزاحمت پر مجھے شدید تشدد کا نشانہ بنایا اور دھمکی دی کہ اگر منہ کھولا تو انجام برا ہوگا۔ خواجہ سراء کرن کے مطابق تھانہ مانانوالہ پولیس کو اطلاع دی تو پولیس نے میری درخواست پر کوئی کاروائی کی نہیں، ملزمان دندناتے پھر رہے ہیں۔ کرن نے متعلقہ اعلیٰ حکام سے فوری داد رسی کا مطالبہ کیا ہے۔ وہاڑی کے نواحی علاقہ چک نمبر65کے بی کے نے حق نوازنے ڈی ایچ کیو ہسپتال میں صحافیوں کو بتایاکہ وہ اوراس کی بیوی محنت کیلئے گھرسے باہر تھے اس کی آٹھ سالہ بچی انعم گھرمیں اکیلی تھی گاؤں کے علی رضا عرف شبو نے اس کے گھر میں داخل ہوکراس کی آٹھ سالہ بیٹی کو زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ بچی کی حالت غیر ہونے پر ملزم بچی کو خون میں لت پت چھوڑ کر فرار ہو گیا۔ اہل محلہ نے متاثرہ بچی کوفوری طورپر رورل ہیلتھ سنٹر لڈن منتقل کیا جہاں پر لیڈی ڈاکٹر اور عملہ نہ ہونے سے بچی کو ڈی ایچ کیو ہسپتال وہاڑی ریفر کردیا گیا۔ بچی کے غریب والدین انصاف کی فریاد لے کر تھانہ لڈن پہنچے لیکن پولیس تھانہ لڈن نے ان کی ایک نہ سنی، کانسٹیبل کے ساتھ بچی کوڈی ایچ کیو ہسپتال وہاڑی روانہ کردیا۔ پولیس تھانہ لڈن نے ملزم کی گرفتاری کیلئے ملزم کے گھر چھاپہ مارا لیکن ملزم نہیں ملا تو ملزم کے باپ ربنواز کو پولیس نے حراست میں لیا۔ دوسری طرف ڈی ایچ کیوہسپتال میں بچی کامیڈیکل کرایا گیا جس میں بچی سے زیادتی ثابت ہو چکی ہے۔ ضلع ساہیوال کی شاہدہ بی بی نے تھانہ گڑھ کے نواحی علاقہ شیرازہ پتن کے بابر بھٹی سے ناجائز مراسم استوار کر رکھے تھے جسے ملنے کیلئے وہ گزشتہ شب شیرازہ پہنچی تو اسی گائوں کے کاشف، مظہر حسین اور طارق حسین نے اسے بابر سے ملانے کا جھانسہ دے کر موٹر سائیکل پر بٹھا لیا اور ویرانے میں لے جا کر اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد فرار ہو گئے۔ متاثرہ خاتون کی درخواست پر پولیس تھانہ گڑھ نے مقدمہ درج کر کے تینوں ملزمان کو گرفتار کر لیا۔ ساہیوال/ سرگودھا کے مقامی صحافی کے بیٹے سے اوباشوں کی اجتماعی زیادتی، حالت غیر ہونے پر سڑک پر پھینک کر فرار ہو گئے۔ تفصیلات کے مطابق مقامی سینئر صحافی سلیم پرنس کا 16سالہ بیٹا حمزہ جو دینی مدرسے میں قرآن پاک حفظ کر رہا تھا گذشتہ رات اسکا دوست نوید مغل اسے نواحی گائوں سجوکہ لے گیا جہاں محمد فاروق اور عامر جوئیہ پہلے سے موجود تھے رات بھر شراب پی کرباری باری اسے زیادتی کا نشانہ بناتے رہے حالت خراب ہونے پر اسے سڑک کنارے پھینک کر فرار ہو گئے۔ پولیس تھانہ ترکھانوالہ نے سلیم کی درخواست پر حمزہ کا طبی معائنہ کرایا پو لیس ملزمان کی گرفتاری کے لئے چھاپے مار رہی ہے مگر تاحال کوئی ملزم گرفتار نہ ہو سکا۔ کامونکے میں چھجوکی روڈ ٹبہ محمد نگر کے محمد اصغر کی بیوی گھر میں اکیلی تھی کہ سبزی منڈی نواں پنڈ سیالکوٹ کا محمد شفاقت مہمان بن کر گھر آیا اور مشروب میں نشہ آور چیز ملا کر اسکی بیوی کو جنسی ہوس کا نشانہ بنا دیا۔ صدر پولیس نے مقدمہ درج کر لیا ہے۔

مزیدخبریں