لاہور ہائیکورٹ ملتان بینچ نے جعلی ڈگری کے الزام میں سزا پانے والے سابق ایم این اے جمشید دستی کو رہا کرنے کا حکم دیدیا ہے۔

10 اپریل 2013 (18:39)

سیشن کورٹ مظفرگڑھ نے سابق ایم این اے جمشید دستی کو تین سال قید اور پانچ ہزار روپے جرمانے کی سزا سنائی تھی۔ جمشید دستی نے فیصلے کے خلاف لاہور ہائیکورٹ ملتان بینچ میں اپیل دائر کی تھی۔ انہوں نے درخواست میں مؤقف اختیار کیا تھا کہ انہیں ٹرائل کورٹ نے چند روز کی سماعت کےدوران بغیر ثبوت غلط سزا دی ہے۔ لاہور ہائیکورٹ ملتان بینچ نے سزا کالعدم قرار دے دی ہے۔