سربیا کےصدر میلوراڈ ڈوڈک نے مسلمانوں کے قتل عام میں ملوث ہم وطن رہنما کارڈ زک کو بچانے کے لیے بوسنیا جنگ کی ذمہ داری مسلمانوں پر ڈال دی.

10 اپریل 2013 (17:32)
سربیا کےصدر میلوراڈ ڈوڈک نے مسلمانوں کے قتل عام میں ملوث ہم وطن رہنما کارڈ زک کو بچانے کے لیے بوسنیا جنگ کی ذمہ داری مسلمانوں پر ڈال دی.

سربیا کے صدر میلوراڈ ڈوڈک نے بین الاقوامی ثالثی عدالت میں دوران سماعت ہم وطن لیڈر"راڈون کاراڈ زک " کا دفاع کرنے کی کوشش کی ،عدالت میں دیئے گئےبیان میں سربیا کے صدر کا کہنا تھاکہ بوسنیا کی جنگ کے ذمہ دار مسلمان تھے،سرببیائی افواج کی طرف سے آپریشن صرف مسلمانوں کی جارحانہ کاروائیوں کوروکنے کے لیے کیاگیاتھا.

،، سربیا کے صدر کے بیان پر اسی ہزار سے زائد شہید ہونے والےمسلمانوں کے لواحقین نے احتجاج کیاہے،ان کا کہنا تھا کہ صدر ڈوڈک نے جھوٹ بول کرعالمی ثالثی عدالت کو گمراہ کرنے کی کوشش کی ہے،دوسری عالمی جنگ کے بعد بوسنیا کے مسلمانوں کا قتل عام یورپ میں سب سے بڑا سانحہ تھا۔