الیکشن ٹربیونل نے ریٹرننگ افسران کے فیصلوں کو معطل کرتے ہوئے ایاز امیر، فیصل صالح حیات اور عابد امام کو الیکشن لڑنے کی اجازت دے دی ہے۔

10 اپریل 2013 (15:09)

الیکشن ٹربیونل راولپنڈی بینچ میں ایاز امیر کے کاغذات نامزدگی مسترد ہونے کے خلاف اپیل کی سماعت دو رکنی بینچ نے کی،ایازامیر کے وکیل نے مؤقف اختیار کیا کہ ملکی تاریخ میں پہلی بار کالمز لکھنے کی بنیاد پرکسی کو نااہل قرار دیا گیاہے جو کہ حیران کن امر ہے، الیکشن ٹربیونل نے ریٹرننگ آفیسر کے فیصلے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے ایاز امیر کو الیکشن لڑنے کی اجازت دے دی، ادھر الیکشن ٹریبونل ملتان بنچ نے فیصل صالح حیات اور عابدامام کے کاغذات نامزدگی منظورکرلئے۔ ریٹرننگ افسر جھنگ نے دونوں امیدواروں کے کاغذات نامزدگی پانی چوری کے الزام میں مقدمات درج ہونے کی بنیاد پر مسترد کردیئے تھے۔ عابد امام پر پانی چوری کے علاوہ بینک کے اکیس لاکھ روپے کے نادہندہ ہونے کا الزام بھی تھا۔ ان کے وکیل نے بینک میں ادائیگی کا سرٹیفکیٹ بھی عدالت میں پیش کیا۔ فیصل صالح حیات اورعابدامام ضلع جھنگ کے حلقہ این اے ستاسی سے ایک دوسرے کے مد مقابل ہیں۔ ادھرلاہورہائیکورٹ ملتان بینچ نے جمشید دستی کی نااہلی کیخلاف اپیل کا فیصلہ محفوظ کرلیا ہے۔