پنجاب کی نگران حکومت کی جانب سے بڑے پیمانے پرکی گئی تقرریوں اورتبادلوں کولاہورہائی کورٹ میں چیلنج کردیا گیا.

10 اپریل 2013 (10:12)

رانا اسد ایڈووکیٹ کی جانب سے دائر کی گئی درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ آرٹیکل 224 کے تحت نگران حکومتوں کے قیام کا مقصد شفاف انتخابات کرانا ہے بیوروکریسی کے تبادلے کرنا نہیں،،انہوں نے درخواست میں یہ موقف بھی اختیار کیا کہ تقرریوں اور تبادلوں سے افسران میں بددلی اور مایوسی پھیلی ہے جس کی وجہ سے ان کی کارکردگی متاثر ہورہی ہے،،،درخواست میں چیف سیکرٹری پنجاب ،سیکرٹری سروسز اور الیکشن کمیشن کو فریق بناتے ہوئے عدالت سے استدعا کی ہے کہ عدالت نگران حکومت کی جانب سے کی گئی تقرریوں اور تبادلوں کو کالعدم قرار دے،،،