ایران میں زلزلہ : 40 افراد جاں بحق‘ 850 زخمی‘ کئی دیہات تباہ

10 اپریل 2013

تہران (نوائے وقت رپورٹ+اے ایف پی+ نیوز ایجنسیاں) ایران کے علاقے بوشہر میں شدید زلزلہ آیا۔ شدت ریکٹر سکیل پر 6.4 ریکارڈ کی گئی۔ ابتدائی اطلاعات کے مطابق ایرانی بلوچستان کے علاقے بوشہر میں زلزلے کے نتیجے میں 40افراد جاں بحق اور 850 زخمی،کئی چھوٹے دیہات تباہ اور سینکڑوں مکانات کو نقصان پہنچا۔ زلزلے کا مرکز بوشہر سے ساٹھ میل مغرب میں ککی کے علاقے میں بتایا گیا ہے جھٹکے دبئی، قطر، بحرین اور سعودی عرب کے کچھ علاقوں میں بھی محسوس کئے گئے۔ ایران کے جنوب مغربی علاقے بوشہر میں ایٹمی پلانٹ بھی ہے جو محفوظ رہا۔ جیالوجیکل سروے کے مطابق زلزلے کی گہرائی دس کلو میٹر تھی۔ گارفورموج میں زیادہ ہلاکتیں ہوئیں ان میں اضافے کا خدشہ ہے۔گورنر بوشہر کے مطابق زلزلے سے جوہری پلانٹ کو کوئی نقصان نہیں پہنچا۔بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق ایران کے سرکاری میڈیا کے مطابق مرنے والے افراد کی تعداد میں اضافہ ہو سکتا ہے۔ زلزلے کے مزید پانچ جھٹکے محسوس کئے گئے جس کی ریکٹر سکیل پر شدت 5.4 تھی۔ روس کی خبر رساں ایجنسی انٹرفیکس نے روسی کنٹریکٹر کے حوالے سے بتایا کہ ایران کا بوشہر میں قائم جوہری پلانٹ محفوظ ہے۔آن لائن کے مطابق زلزلے سے بجلی اور مواصلات کا نظام بھی درہم برہم ہوگیا، دوسری جانب بڑے پیمانے پر امدادی کارروائیوں کا آغاز کر دیا گیا ہے، رضا کاروں پر مشتمل امدادی ٹیموں کے ساتھ ساتھ سکیورٹی فورسز کو بھی تعینات کیا گیا ہے، ہلاکتوں میں مزید اضافے کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔