ادبی سرگرمیوں کے فروغ کیلئے اقداما ت کر رہے ہیں

09 ستمبر 2017

اسلام آباد (وقائع نگار خصوصی)اکادمی ادبیات پاکستان بیرو ن ملک جہاں پاکستانی اہل قلم موجود ہیں، ادبی سرگرمیوں کے فروغ اور بیرون ملک پاکستانی اہل قلم کے کوائف جمع کرنے کے لےے فوکل پرسن نامز د کررہی ہے۔ یہ بات اکادمی ادبیات پاکستان کے چےئرمین ڈاکٹر محمد قاسم بگھیو، نے ایک بریفنگ میں بتائی۔ انہوں نے بتایا کہ اکادمی ادبیات پاکستان کے بورڈ آف گورنرنے فیصلہ کیا ہے کہ اکادمی ادبیا ت پاکستان دنیا بھر میں پاکستانی اہل قلم کو فوکل پرسن نامز د کرے۔اکادمی ادبیات پاکستان نے اس منصوبہ پر کام شروع کر دیا ہے اور بیشتر ممالک میں رہائش پذیر پاکستانی اہل قلم کو فوکل پرسن بنایا جائےگا۔ بیرون ملک جہاں کہیں بھی مناسب تعداد میں پاکستانی رہائش پذیر ہیں اُن میں اہل قلم کی بھی قابلِ لحاظ تعداد موجود ہوتی ہے۔ پاکستانی اہل قلم ادبی سرگرمیوں کا وقتاً فوقتاً اہتمام تواتر کے ساتھ کرتے رہتے ہیں لیکن پاکستا ن سے انہیں کسی قسم کی معاونت نہیں ملتی اور بیرون ملک پاکستانی اہل قلم کے کوائف بھی مکمل طورپرموجود نہیں ہیں۔اکادمی ادبیات پاکستان ان فوکل پرسن کے ذریعے بیرون ملک ادبی سرگرمیوں کو فروغ دے گی اور پاکستانی اہل قلم کے کوائف بھی جمع کرے گی۔انہوں نے بیرون ملک پاکستانی اہل قلم سے درخواست کی ہے کہ جو اس سلسلہ میںدلچسپی رکھتے ہوں وہ اکادمی ادبیات پاکستان سے ای میل پر رابطہ کرسکتے ہیں۔

غیر ادبی و ادبی

ملک کی سیاسی و سماجی صورت حال سخت غیر ادبی ہے۔ وہ چاہے میاں صاحب کی عدلیہ ...