پنجاب حکومت شمسی توانائی کے مواقع سے خاطر خواہ فائدہ نہیں اٹھا سکی

09 ستمبر 2017

ملتان (نامہ نگار خصوصی) صوبائی حکومت گرم ترین خطے (جنوبی پنجاب) میں شمسی توانائی (سولر انرجی) سے بجلی کی پیداوار کا زیادہ سے زیادہ فائدہ نہیں اٹھا سکی مسلم لیگ ن کی حکومت نے اقتدار میں آتے ہی بہاولپور میں قائداعظم سولر پارک کا سنگ بنیاد رکھا اور ایک ہزار میگاواٹ بجلی کی پیداوار کے اس منصوبے کو انقلابی اقدام قرار دیتے ہوئے ملک میں لوڈ شیڈنگ کے خاتمے کیلئے اہم پیش رفت قرار دیا گیا اور اس منصوبے کی پنجاب کے تمام شہروں میں بھرپور تشہیر کی گئی لیکن یہ منصوبہ ناکامی سے دوچار ہو گیا اور صرف 100 میگاواٹ تک محدود ہو کر رہ گیا ناکامی کے ساتھ ساتھ حکومت نے اس کی ذمہ داری اٹھانے سے بھی انکار کر دیا اور اب اس پاور پلانٹ کی نجکاری کیلئے روڈ شو کے انعقاد کا اعلان کر دیا گیا ہے۔
شمس توانائی