میانمارمیں قتل عام سفاکیت کی بدترین مثال ہے،بشارت مرزا

09 ستمبر 2017

کراچی ( اسٹاف رپورٹر ) پاکستان ڈیموکریٹک پارٹی کے مرکزی صدر بشارت مرزانے میانمارمیں روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی پر شدید مذمت کرتے ہوئے حکومت پاکستان سے مطالبہ کیاہے کہ میانمارسے سفارتی تعلقات منقطع کئے جائیں اور جب تک مظلوم لوگوں پر ظلم بندنہیں ہوجاتاپاکستان میںموجودمیانمارکا سفارت خانہ فوری طور پربند کیاجائے۔انہوں نے کہاکہ ایک طرف پاکستان مظلوموں کی دادرسی کیلئے کوئی مؤثر اقدام نہیں اٹھارہادوسری جانب میں پاکستان میں پناہ لینے والے روہنگیا مسلمانوں کو حقوق دینے سے گریزاںہے،پاکستان نے پچیس لاکھ افغانیوں کو بسایالیکن ڈھائی لاکھ روہنگیاتارکین کو انسانی حقوق فراہم نہیں کئے جارہے،پاکستان میں کئی سالوں سے مقیم لاکھوں تارکین آج بھی دربدر کی ٹھوکریں کھارہے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ برمی مسلمان ہمارے بھائی ہیںکئی سالوں سے ان پر اپنی آبائی سرزمین تنگ کی جارہی ہے
ایسے میں مسلم ممالک کی ذمہ داری ہے کہ ان کی مدد کریں لیکن افسوس اقوام متحدہ کے بعددنیاکادوسرا بڑادارہ اوآئی سی بھی خاموش ہے،اوآئی سی کوچاہئے کہ فوری طورپر اجلاس بلاکر میانمار مسئلے کے حل کیلئے ہنگامی اقدامات اٹھائے۔