ملک آفات میں گھرا ہے، عمران، قادری کے احتجاجی ڈرامے ختم نہیں ہو رہے: مولانا خلیل

09 ستمبر 2014

اسلام آباد(اے این این  )انصارلامہ پاکستان کے سربراہ مولانافضل الرحمن خلیل نے کہاہے کہ ملک میں بارشوں اورسیلاب نے تباہی مچادی ہے، پارلیمنٹ کے سامنے دھرنے میں بیٹھی ہوئی جماعتیں قوم کی حالت پررحم کریں عمران خان اور طاہرالقادری حصول اقتدار کی جنگ چھوڑکرمتاثرین کی مددکریں۔ پنجاب میں بارشوں اورسیلاب میں پھنسے افرادکی ریسکیوکاعمل جاری ہے۔ ان خیالات کااظہارانہوں نے صحافیوں کے ایک وفداوربعدازاں کارکنوں کومتاثرہ علاقوں کی طرف روانہ کرتے ہوئے ان سے خطا ب کرتے ہوئے کیا۔ مولانافضل الرحمن خلیل نے کہاکہ بھارتی آبی دہشت گردی لائن آف کنٹرول پر جارحیت سے زیادہ خطرناک ہے‘بھارت اپنے علاقوں کو بچانے اور پاکستان کو معاشی طور پر اپاہج بنانے کے لیے دریائوںمیں پانی چھوڑ دیتا ہے جس سے ہر سال بڑے پیمانے پر تباہی ہورہی ہے‘ انہوں نے کہاکہ ملک ڈوب رہا ہے اور عمران خان اور طاہرالقادری ابھی بھی حصول اقتدار کی جنگ لڑ رہے ہیں۔پاکستان اس وقت بد ترین سیلابوں اور قدرتی آفات میں گھرا ہوا ہے جبکہ عمران اور قادری کے احتجاجی ڈرامے ابھی بھی ختم نہیں ہو رہے۔ دونوں کو چاہیے تھا کہ شور شرابے اور حصول اقتدار کی سیاست کچھ دن کیلئے چھوڑ کر سیلاب سے متاثرہ لوگوں کی مدد کرتے۔ لیکن افسوس کے دونوں اپنے ذاتی ایجنڈے کی تکمیل کیلئے اس قدر آگے بڑھ چکے ہیں کہ انہیں اپنی ذات کے سوا کچھ نظر ہی نہیں آتا۔