تحریک انصاف کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی کہتے ہیں،چیف الیکشن کمشنر بااعتماد انسان ہیں، چاروں صوبائی ارکان متنازع ہیں۔ اس لئے الیکشن کمیشن میں آپریشن کلین اپ کی ضرورت ہے۔

09 دسمبر 2014 (18:57)

اسلام آباد میں نئے چیف الیکشن کمشنر سردار محمد رضا خان سے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے وائس چئیرمین تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ ملک میں شفاف انتخابات کا بیٹرا تحریک انصاف نے اٹھا رکھا ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ الیکشن کمیشن کو صاف کرنے کی ضرورت ہے۔ اگر یہ نہ کیا گیا تو آئندہ بھی غلطیاں سامنے آتی رہیں گی۔ شاہ محمود قریشی کا مزید کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن کی ساکھ بحال کرنا سردار محمد رضا کے لئے چیلنج ہو گا تاہم پی ٹی آئی ان سے بھرپور تعاون کرے گی۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بیلٹ پیپرز چھاپنا الیکشن کمیشن کی بنیادی ذمہ داری ہے۔ نئے چیف الیکشن کمشنر کے سامنے چند تجاویز رکھی ہیں کہ ہمیں پولنگ اسکیم پر تشویش ہے۔اسی لیے بائیو میٹرک سسٹم کے ذریعے شفاف انتخابات کرائے جائیں۔ سردار محمد رضا کے سامنے بیلٹ پیپرز کی چھپائی کا معاملہ بھی اٹھایا ہانہوں نے مزید کہا کہ الیکشن کمیشن نے بیلٹ پیپرز چھاپنے کے حوالے سے 4 بار اپنا موقف تبدیل کیا۔ نئے چیف الیکشن کمشنر کے آنے سے حوصلہ ہوا لیکن حالیہ انتخابات میں دھاندلی میں ملوث افراد کو ہٹائے بغیر شفاف انتخابات ممکن نہیں۔