فیصل آباد واقعے کےخلاف متحدہ اپوزیشن نے پنجاب اسمبلی کےاجلاس سے واک آؤٹ کیا،جماعت اسلامی کے رکن اسمبلی ڈاکٹروسیم اخترکاکہناہے کہ معاملات کی بہتری کےلیے حکومت کو مزید آگے آناہوگا،

09 دسمبر 2014 (17:35)
فیصل آباد واقعے کےخلاف متحدہ اپوزیشن نے پنجاب اسمبلی کےاجلاس سے واک آؤٹ کیا،جماعت اسلامی کے رکن اسمبلی ڈاکٹروسیم اخترکاکہناہے کہ معاملات کی بہتری کےلیے حکومت کو مزید آگے آناہوگا،

پنجاب اسمبلی میں  فیصل آباد  واقعے کا موضوع زیر بحث رہا،،،جماعت اسلامی، پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ قاف پر مشتمل متحدہ اپوزیشن نے فیصل آباد میں پی ٹی آئی کے کارکن کی ہلاکت کے خلاف  اجلاس سےاحتجاجاً واک آؤٹ کیا،پنجاب اسمبلی کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے جماعت اسلامی کے رہنما ڈاکٹر وسیم اخترکاکہناتھاکہ سانحہ فیصل آباد کےبعد حکومت کی جانب سے ردعمل افسوس ناک ہے،،،ایسے واقعات سے جمہوریت کو نقصان ہوگاحکومت کو مذاکرات کے لئے ایک قدم آگے بڑھنا ہو گا اورمعاملات کی بہتری کےلئے تحریک انصاف کو مذاکرات کی میز پرلانا ہوگا،جب کہ پنجاب حکومت کےترجمان زعیم قادری کاکہناتھا کہ  قاف لیگ کی قیادت نےفیصل آباد میں  تحریک انصاف کا ساتھ دیاہڑتال کی کال مسترد ہونے پر  تشدد کا راستہ اپنایا گیاعمران خان جاں بحق کارکن حق نواز کے قتل کے ملزم ہیں خان صاحب پچھلے دروازے کے ذریعے  وزارت عظمیٰ حاصل کرنا چاہتےہیںزعیم قادری کا مزید کہنا تھا کہ حکومت کاجمہوری طرز عمل ریاست کی کمزوری نہ سمجھا جائےریاست کی  رٹ کو ہر صورت قائم رکھا جائے گا