حافظ آباد: لو میرج کرنے والا جوڑا لڑکی کے رشتہ داروں کے ہاتھوں قتل

09 دسمبر 2014

حافظ آباد (نمائندہ نوائے وقت) 2 ہفتے قبل پسند کی شادی کرنے والے جوڑے کو لڑکی کے رشتہ داروں نے فائرنگ کرکے قتل کر دیا۔ جناح کالونی فیصل آبادکے رہائشی بی ایس سی کے طالب علم احمد علی نے ماڈل ٹاﺅن فیصل آباد کی رہائشی ایف ایس سی کی طالبہ ثمن رانی سے 24 نومبرکو پسند کی شادی کی۔ شادی کے بعد احمد علی، ثمن رانی کو لیکر اپنی پھوپھو کے گھر مدینہ کالونی حافظ آباد آگیا۔ پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ ثمن کے گھر والوں نے اُسکی شادی قریبی رشتہ دار ندیم مشتاق سے طے کی تھی لیکن اُس نے گھر سے فرار ہو کر احمد علی سے پسند کی شادی کر لی جس پر ثمن کے گھر والے خوش نہ تھے۔ احمد علی اپنی بیوی کے ہمراہ اپنی پھوپھو کے گھر موجود تھا جہاں اطلاع پر ثمن کے والد نوید احمد، منگیتر ندیم مشتاق اور دو نامعلوم نے اندھا دھند فائرنگ کرکے اُنہیں موت کے گھاٹ اُتار دیا اور فائرنگ کرتے ہوئے فرار ہو گئے۔ پولیس تھانہ سٹی نے دونوں نعشیں قبضہ میں لیکر ضروری کارروائی کےلئے ڈسٹرکٹ ہسپتال منتقل کر دیں۔ سٹی پولیس نے مقتولہ ثمن کے والد نوید احمد سابق منگیتر ندیم مشتاق سمیت چار افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا تاہم کوئی ملزم گرفتار نہیں ہو سکا۔
جوڑا قتل






آئین سے زیادتی

چلو ایک دن آئین سے سنگین زیادتی کے ملزم کو بھی چار بار نہیں تو ایک بار سزائے ...