لیفٹیننٹ جنرل رضوان نے آئی ایس آئی چیف کی ذمہ داریاں سنبھال لیں

08 نومبر 2014

اسلام آباد (وقائع نگار خصوصی + نیوز ایجنسیاں) آئی ایس آئی کے نئے سربراہ لیفٹیننٹ جنرل رضوان اختر نے اپنے عہدے کا چارج سنبھال لیا۔ میجر جنرل سے لیفٹیننٹ جنرل کے عہدے پر ترقی پانے والے رضوان اختر لیفٹیننٹ جنرل ظہیر الاسلام کی ریٹائرمنٹ کے بعد آئی ایس آئی کے 21 ویں سربراہ کی حیثیت سے اپنی ذمہ داریاں انجام دیں گے جبکہ اس سے قبل وہ ڈائریکٹر جنرل سندھ رینجرز کے طور پر فرائض انجام دے رہے تھے۔ لیفٹیننٹ جنرل رضوان اختر اپنی ذمہ داریاں سنبھالنے کیلئے آئی ایس آئی ہیڈ کوارٹر پہنچے تو اعلیٰ افسروں نے ان کا خیر مقدم کیا۔ نئے ڈی جی آئی ایس آئی کا سینئر افسروں سے تعارف کرایا گیا اور انہیں ادارے کے بارے میں ابتدائی بریفنگ دی گئی۔ بی بی سی کے مطابق جنرل رضوان اختر نے ایک ایسے وقت میں آئی ایس آئی کی کمان سنبھالی ہے جب ملک کے اندر اور ملک سے باہر کئی چیلنجوں کا سامنا ہے۔ پاکستان کو طالبان کے جہادیوں کا سامنا ہے جو ریاست کو شکست دینا چاہتے ہیں، بلوچ قوم پرست آزادی کیلئے لڑ رہے ہیں اور ملک میں فرقہ واریت قتل و غارت اپنے عروج پر ہے۔ امریکہ کا افغانستان سے انخلا بھی پاکستان کیلئے متعدد مسائل پیدا کررہا ہے جس کی وجہ سے اسے بین الاقوامی تنہائی کا سامنا ہے۔ اس بات کا امکان ہے کہ نئے ڈی جی آئی ایس آئی کا عہدہ سنبھالنے کے بعد لیفٹیننٹ جنرل رضوان اختر آئی ایس آئی میں تبدیلیاں کریں گے۔