شعائر اسلام کی توہین کے الزامات کا مقدمہ بغیر تحقیقات درج نہیں کرنا چاہیے: ساجد میر

08 نومبر 2014

لاہور (خصوصی نامہ نگار ) مرکز ی جمعیت اہلحدیث کے سربراہ سنیٹر پروفیسرساجد میر نے  کوٹ رادھا کشن میں محنت کش مسیحی جوڑے کوزندہ جلا نے کے  واقعہ کی  مذمت کی ۔ جامعہ ابراہیمیہ سیالکوٹ میں جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ توہین رسالت یا توہین قرآن کی خود ساختہ الزامات کی تحقیقات کے بغیر ایف آئی آر درج نہیں ہونی چاہیے۔ عدالت میں ایسے کیسز کا منصفانہ ٹرائل ناممکن ہے۔ ٹرائل سے پہلے ہی مشتعل گروہ ملزم کو قتل کردیتا ہے چاہے جرم ثابت ہوا ہو یا نہیں۔ انہوں نے کہا کہ توہین رسالت کے قانون میں ایک شق یہ بھی ہے کہ جھوٹا الزام لگانے والے کے جرم ثابت ہونے پر بھی سزائے موت ہے۔