بیوی اور نومولود بیٹی کا قاتل ساری رات رو رو کر اپنے گناہوں کی معافی مانگتا رہا

08 نومبر 2013

شیخوپورہ (آئی این پی) شیخوپورہ کے تھانہ بھکھی کے رہائشی شقی القلب باپ اور سنگدل خاوند کو نومولود بیٹی اور اپنی بیوی کو قتل کرکے تھانے میں ساری رات چین نہ آیا‘ ملزم ساری رات اونچی آواز سے زار و قطار رو رو کر اپنے گناہوں کی اﷲ تعالیٰ اور گھر والوں سے معافی مانگتا رہا۔ تفصیلات کے مطابق فیصل آباد روڈ پر واقع نواحی قصبہ نواں کوٹ کی آبادی واڑہ کریم کے رہائشی محکمہ تعلیم کے نائب قاصد عامر کی بیوی نے پانچ بچیوں کو جنم دیا چھٹے بچے کی پیدائش سے قبل ملزم نے بیوی کو دھمکی دی کہ اگر اس بار بھی بچی پیدا ہوئی تو وہ نہ صرف بچی بلکہ اسے بھی قتل کردے گا ۔ملزم کی بیوی نے تقریباً 20 روز قبل چھٹی بچی کو جنم دیا تو اس نے بچی کو پانی میں ڈبو کر مار دیا اور مشہور کردیا کہ مردہ بچی ہوئی تھی ملزم اس کے بعد مسلسل اپنی بیوی سے لڑائی کرتا رہا اور گزشتہ روز اپنی بیوی پر پستول سے فائرنگ کرکے اسے قتل کردیا جس کے بعد علاقہ کے افراد نے اسے پولیس کے حوالے کردیا۔ پولیس کے مطابق ملزم نے حوالات میں اپنی پہلی رات رو رو کر اپنے گناہوں کی معافی مانگتے ہوئے گزاری ملزم نے تھانے میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ چھٹی بیٹی کی پیدائش کے بعد میرا ذہن مکمل طور پر بند ہوچکا تھا ،میں ایجوکیشن میں بطور نائب قاصد کام کرتا ہوں سوچتا تھا اپنی پندرہ ہزارتنخواہ سے گھر کا کچن چلائوں گا یا اپنی بیٹیوں کے لئے جہیز بنائوں گا۔