کراچی کو سب سے زیادہ سکیورٹی تھریٹس کا سامنا ہے: گورنر سندھ

08 نومبر 2013

کراچی (وقائع نگار) گورنر سندھ ڈاکٹر عشرت العباد خان نے کہاہے کہ کراچی دو کروڑ سے زائد افرادکی آبادی کا شہر اور ملک کا اقتصادی حب ہے جو سب سے زیادہ ریونیو فراہم کرتا ہے اس لئے اس شہر میں سب سے زیادہ سیکیورٹی تھریٹس رہتے ہیں خاص طور پر اہم ایام پر جیسا کہ ربیع الاول ، عید الاضحی، عید الفطراور محرم الحرام سیکیورٹی تھریٹس زیادہ ہوتے ہیں ۔ اس شہر میں اغوا ءبرائے تاوان ، بھتہ خوری ، ٹارگٹ کلنگ اور اسٹریٹ کرائم جیسے جرائم نمایاںہیں جس کے خلاف وزیر اعظم کی ہدایت پر آپریشن جاری ہے ،گذشتہ دو روز میں ٹارگٹ کلنگ دیکھی گئی ہے جس کا مقصد فرقہ وارانہ فسادات کرنا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کا سب سے بڑا مسئلہ غربت او ر تعلیم کا ہے ۔ وہ گورنر ہاﺅس میں Officers Gunnery Staff Course کے شرکاءسے گفتگو کررہے تھے ۔ گورنر سندھ نے کہا کہ کراچی میں ملک کے دیگر شہروں سے لوگ روزی اور روزگار کے حصول کے لئے آتے ہیں اور پھر یہاں آکر آباد ہوجاتے ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ نار درن بائی پاس اور دیگر مضافاتی علاقے جہاں سے لوگوں کو دھمکیاں ملتی ہیں ان علاقوں میں سیکیورٹی کا موثئر نظام وضع کیا جارہا ہے اور پورے شہر میں سر ویلنس کیمرو اور ہیو من انٹیلی جنس کا جال بچھا یا جارہاہے تاکہ ایسے منظم گروپ کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جاسکے۔ ا نہوں نے کہا کہ توانائی اس وقت ملک کا اہم مسئلہ ہے اور حکومت کی کوشش ہے کہ کم سے کم وقت میں اس مسئلے کو حل کیا جائے ۔