وزیر خارجہ کا عدم تقرر‘ وزارت کے حکام اہم قومی امور پر رہنمائی سے محروم

08 جولائی 2013

اسلام آباد (سہیل عبدالناصر) وزارت خارجہ اور قومی سلامتی کے اداروں کی طرف سے وزیر خارجہ مقرر کئے جانے کی ضرورت کو مسلسل اجاگر کیا جا رہا ہے۔ اس ضمن میں وزیراعظم نواز شریف کو بھی بالواسطہ باور کرایا جا رہا ہے کہ قومی اہمیت کے کلیدی معاملات پر بروقت سیاسی رہنمائی اور کیلئے وزیر خارجہ کا تقرر ضروری ہے۔ واضح رہے کہ وزیر اعظم نے خارجہ امور کا قلمدان اپنے پاس رکھتے ہوئے سرتاج عزیز کو خارجہ امور اور سلامتی کے معاملات پر اپنا مشیر مقرر کیا ہے جب کہ طارق فاطمی خارجہ امور پر وزیراعظم کے معاون خصوصی ہیں۔ دفتر خارجہ کے ذرائع کے مطابق سرتاج عزیز نہایت تجربہ کار اور جہاندیدہ شخصیت ہیں جو پاکستان کے وزیر خارجہ بھی رہ چکے ہیں لیکن مشیر اور معاون خصوصی موجود ہونے کے باوجود وزارت خارجہ اور منتخب سیاسی قیادت کے درمیان روابط کا فقدان ہے۔ اس ذریعہ کے مطابق نئی حکومت کے قیام کے بعد ایک اہم قومی معاملہ پر رہنمائی میسر نہ ہونے کی وجہ سے دفتر خارجہ چار گھنٹوں تک گو مگو کا شکار رہا۔