فقط جھنڈا سواری کیلئے.... مظفر محسن

08 جولائی 2013

رشوتیں عام ہوئیں کام ”معیاری“ کیلئے ۔۔۔ آ کریں بات کوئی وقت گزاری کیلئے
خرچ کر بیٹھے بہت نوٹ الیکشن پہ ۔۔۔ ”یوز“ کرنے لگے اب گدھا سواری کیلئے
 جانتے ہیں سبھی ”خاں“ نے بڑے پاپڑ بیلے ۔۔۔ اقتداری کیلئے، اپنی باری کیلئے
کیوں الیکشن لڑا لاکھوں لٹائے کیونکر! ۔۔۔ یہ مشقت تھی فقط جھنڈا سواری کیلئے
بھوکا بندر سدا ناچتا ہے گلیوں میں ۔۔۔ فنکاری کیلئے محض مداری کیلئے!