مری میں 25 سیٹ سے زائد بسوں کے داخلے پر پابندی کا مطالبہ

07 نومبر 2017

مری (نامہ نگار خصوصی ) گزشتہ روز یہاں ایک جوں سالہ نو بیاہتا جوڑا جس کو ایک تیز رفتاد بڑی کوچ نے کچل ڈلا تھا اور اس کے نتیجے میں نوجوان کی موقع پر ہی موت واقع ہوئی تھی ۔اس واقع کے بعد عوام میں ایسی بڑی گاڑیوں کے داخلہ پر سختی سے بابندی عائد کیئے جانے کا مطالبہ کیا جا رہا ہے ۔ ان حلقوں کا کہنا ہے کہ ایسی طویل چالیس سیٹر بسیں آئے روز نہ صرف مری میں ٹریفک کی آمد و رفت کو بری طرح متاثر کر رہی ہیں بلکہ جان لیوا حادثات کا باعث بھی بنی ہوئی ہیں ۔ سٹی ٹریفک پولیس بااثر افرادکے دبائو میں آکر ایسی بڑی بسوں کے مری میں داخلے ہونے سے روکنے میں بری طرح نا کام ہوئی ہے حلقوں کے مطابق حکومت پنجاب اور ضلعی انتظامیہ کسی ایسے حادثے کا انتظارکررہی ہے جس میں بڑے پیمانے پر جانیں ضائع ہو ہو سکتی ہیں ۔ان لوگوں نے مری میں 25 سیٹ سے زائد بسوں کے داخلے پر فوری پابندی عائد کیئے جانے کا مطالبہ کیا ہے تاکہ حادثات میں کمی ہو اور مری میں ٹریفک کی روانی بھی متاثر نہ ہو کی ۔