سول ایوی ایشن کے ادنیٰ ملازمین مالی پریشانیوں کا شکار

07 نومبر 2017

کراچی(اسٹاف رپورٹر) ملک کے اہم ترین ادارے سول ایوی ایشن کے اعلیٰ دور میں ادنیٰ درجے کے ملازمین چار سال سے انکریمنٹ سے محروم ہیں‘ ادارے کے اعلیٰ افسران ملازمین کو انکا قانونی حق دینے کو تیارنہیں۔ سول ایوی ایشن کے ذرائع کے مطابق ادارے کے چارٹرڈ کے مطابق ہر تین سال کے بعد تنخواہوں میں اضافہ ضروری ہے۔ تاہم 2014 کے بعد سے ادارے کے ملازمین اس حق سے محروم ہیں‘ اسی دوران مرکزی حکومت نے تین بار سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 15,15 فیصد اضافہ کیا۔ ذرائع کے مطابق ادارے کے چیف ایگزیکٹیو ہفتہ میں صرف ایک دن دفتر آتے ہیں ان کی جگہ ڈائریکٹر ایچ آر ہیومن ریسورسز معاملات کو دیکھ رہے ہیں‘ ایڈیشنل ڈی جی بھی ملازمین کو ریلیف دینے کو تیار نہیں‘ مہنگائی کے اس دور میں ایک اہم ادارے کے ملازمین کو مالی پریشانی میں مبتلا کرنا قومی مفاد میں متاثرہ ملازمین کا وزارت ڈیفنس سے مطالبہ کیا ہے کہ سول ایوی ایشن کے ملازمین کے انکریمنٹ کے مسئلہ کوحل کیاجائے۔