گورنر سٹیٹ بینک کی تقرری ، سیکرٹری خزانہ اور طارق باجوہ سے جواب طلب

07 نومبر 2017

اسلام آباد (نمائندہ نوائے وقت)اسلام آباد ہائی کورٹ نے 23 سینیٹروں کی جانب سے گورنر سٹیٹ بنک طارق باجوہ کی تقرری کے خلاف دائردرخواست پر سیکرٹری خزانہ اور گورنر اسٹیٹ بنک کو نوٹس جاری کرتے ہوئے تحریری جواب طلب کر لیا ہے۔پیر کو کیس کی سماعت عدالت عالیہ کے جسٹس میاں گل حسن اورنگ زیب نے کی ۔درخواست گزاروں کی جانب سے سردار لطیف کھوسہ عدالت میں پیش ہوئے اور موقف اختیار کیا کہ گورنر سٹیٹ بنک کی تقرری کے طریقہ کار کو نظر انداز کیا گیا اور آئین کے آرٹیکل 4 اور 25 کی خلاف ورزی کی گئی۔ 16 اگست 2017 کو سینٹ میں گورنر سٹیٹ بنک کی تقرری کے خلاف قرارداد بھی پاس کی گئی۔ درخواست گزارسینیٹروں میں فرحت اللہ بابر‘ سسی پلیجو‘ فاروق ایچ نائیک اور دیگر شامل ہیں۔عدالت نے کیس کی مزید سماعت ایک مہینے تک ملتوی کر دی۔