قائمہ کمیٹی انفارمیشن ٹیکنالوجی کا موبائل سموں کی فروخت کا ٹارگٹ دینے پر اظہار تشویش

07 نومبر 2017

اسلام آباد (آن لائن) سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی نے زیادہ تعداد میں موبائل سموں کی فروخت کا ٹارگٹ دینے پر تشویش کا اظہار کردیا۔ چیئرمین کمیٹی شاہی سید نے کہا کہ لوگوں کو زبردستی سمیں دی جاتی ہیں کہ انہیں بانٹیں۔ 2 ہزار سمیں بانٹنے کا ٹارگٹ کوئی کیسے پورا کرے گا۔ وہ کب تک بیچے گا اور کیسے بیچے گا اس سے سموں کا غلط استعمال ہوگا۔ ملک حالت جنگ میں ہے۔ دھماکوں میں چوری کی گاڑیاں استعمال ہوتی ہیں۔ سمیں بھی بم ہیں ان پر دھماکہ ہوتا ہے کسی کے نام کی سم حاصل کرنا بہت آسان ہے۔ ان پڑھ آدمی کو کوئی بھی دو ہزار روپے دے کر سم لے سکتاہے۔ سمیں تصدیق کرکے بیچی جائیں کمیٹی نے متعلقہ حکام کو پی ٹی سی ایل کے ریٹائرڈ ملازمین پنشن میں اضافہ نہ ملنے کے مسئلے کو حل کرنے کی ہدایت کردی۔ پیر کو سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی کا اجلاس سینیٹر شاہی سید کی صدارت میں ہوا۔ پی ٹی سی ایل کے ریٹائرڈ ملازمین کو پنشن میں اضافہ نہ ملنے کے معاملے کا جائزہ لیا گیا۔
انفارمیشن کمیٹی