نیب ریفرنسز کی سماعت‘ نواز شریف آج چوتھی بار احتساب عدالت پیش ہونگے

07 نومبر 2017

اسلام آباد(نا مہ نگار)اسلام آباد کی احتساب عدالت آج شریف خاندان کیخلاف نیب ریفرنسز کی سماعت کرے گی،شریف خاندان کے وکیل خواجہ حارث ایڈووکیٹ نیب ریفرنسز کو یکجا کرنے کے حق میں اورنیب کی پراسیکیوشن اس کے خلاف دلائل دیں گے،جبکہ وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈارکے خلاف نیب کی جانب سے آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے حوالے سے دائر ریفرنس کی سماعت کل (8اکتوبر)بدھ کو ہو گی ۔آج (منگل کو)سابق وزیراعظم نواز شریف چوتھی بارجبکہ مریم نواز، کیپٹن (ر) صفدرچھٹی بار احتساب عدالت پیش ہوں گے۔گزشتہ سماعت پر عدالت نے مقدمے کی کارروائی آج 7نومبر تک ملتوی کرتے ہوئے قرار دیا تھا کہ آئندہ سماعت پر گواہان کو آنے کی ضرور ت نہیں پہلے ہائیکورٹ کے حکم کی روشنی میں ریفرنسز کو یکجا کرنے سے متعلق درخواست پر فیصلہ کیا جائے گا کیونکہ ہائی کورٹ نے دوبارہ سماعت کرکے تفصیلی فیصلہ کرنے کا حکم دیا ہے ۔فاضل جج کاکہنا تھا کہ ہائی کورٹ کا تفصیلی فیصلہ آنے تک دلائل نہیں سن سکتے، اس لئے آئندہ سماعت پر طلب گواہوں کو نہ بلایا جائے۔شریف خاندان کی پیشی کے موقع پر احتساب عدالت کے باہر سیکیورٹی ہائی الرٹ ہو گی ۔ فیڈرل جوڈیشل کمپلیکس میں عام افراد کے داخلے پر پابندی ہوگی ،صرف وہی حضرات عدالت میں داخل ہو سکیں گے جن کے نام انتظامیہ کی طرف سے بنائی گئی فہرست میں شامل ہوں گے ۔دوسری جانب وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈارکے خلاف نیب کی جانب سے آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے حوالے سے دائر ریفرنس کی سماعت کل (8اکتوبر)بدھ کو ہو گی۔گزشتہ سماعت پر احتساب عدالت نے میڈیکل سرٹیفکیٹ کی بنیاد پر وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈارکی حاضری سے استثنیٰ اور نیب کی جانب سے وزیر خزانہ اسحاق ڈار کے نا قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کرنے کی درخواستیں مستردکرتے ہوئے ان کے قابلِ ضمانت وارنٹ گرفتاری برقرار رکھنے کا حکم دیاتھا۔