لاہورہائیکورٹ نے پولیس اہلکاروں کی جانب سے خاتون کو سرعام برہنہ کرنے کے خلاف دائر درخواست پر سی سی پی او لاہور امین وینس اور ڈی جی ایف آئی اے سمیت فریقین سے تفصیلی جواب طلب کر لیا

07 نومبر 2017

لاہور(وقائع نگار خصوصی)لاہورہائیکورٹ نے پولیس اہلکاروں کی جانب سے خاتون کو سرعام برہنہ کرنے کے خلاف دائر درخواست پر سی سی پی او لاہور امین وینس اور ڈی جی ایف آئی اے سمیت فریقین سے تفصیلی جواب طلب کر لیا۔ لاہورہائیکورٹ کے جسٹس انوارلحق نے صفدر شاہین پیرزادہ کی درخواست پر سماعت کی۔ درخواستگزار وکیل کی جانب سے استدعا کی گئی کہ خاتون کو سرعام برہنہ کرکے تلاشی لینے کی کسی بھی قانون میں اجازت نہیں۔ ویڈیو وائرل ہونے پر آئی جی اور ڈی جی ایف آئی اے نے کوئی نوٹس نہیں لیا،درخواستگزار وکیل نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ ایسے واقعات کو روکا نہ گیا تو مستقبل میں مزید واقعات پیش آسکتے ہیں۔