عالمی برادری مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا نوٹس لے: اعزاز چوہدری

07 نومبر 2017
 عالمی برادری مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا نوٹس لے: اعزاز چوہدری

واشنگٹن (آئی این پی) امریکہ میں پاکستان کے سفیر اعزاز چوہدری نے کہا ہے کہ بین الاقوامی برادری مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی جانب سے انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا نوٹس لے‘ کشمیری مجاہد برہان وانی کی شہادت نے واضح کیا کہ کشمیری عوام بھارت کے ظلم و ستم کا ڈٹ کر مقابلہ کرنے کے لئے تیار ہیں‘ پاکستان کشمیریوں کی سیاسی‘ اخلاقی اور سفارتی حمایت جاری رکھے گا۔ سابق سیکرٹری خارجہ ریاض محمد خان نے کہا کہ اقوام متحدہ کی کشمیریوں کے حق خود ارادیت کی قراردادوں پر ابھی تک عمل درآمد نہیں کیا جاسکا۔پیر کو واشنگٹن میں کشمیر کے یوم سیاہ کے موقع پر پاکستان ایمبیسی میں کشمیر کی ستر سالہ جدوجدہ کے نام سے سیمینار کا انعقاد کیا گیا۔ سیمینار میں اس امر پر اتفاق کیا گیا کہ عالمی برادری مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم بند کرانے میں اپنا کردار ادا کرے۔ امریکہ میں پاکستان کے سفیر اعزاز چوہدری نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ بین الاقوامی برادری مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی جانب انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا نوٹس لے۔ کشمیری امریکی کمیٹی کے سیکرٹری جنر سردار ذوالفقار خان‘ سردار سوار خان اور جارج واشنگٹن یونیورسٹی کے پروفیسر ڈاکٹر امتیاز خان نے بھی اس موقع پر اپنے خیالات کا اظہار کیا۔ انہوں نے کشمیری خواتین اور بچوں پر ہونے والے ظلم و ستم پر روشنی ڈالی جس کا سامنا کشمیری ستر سال سے کررہے ہیں۔ انہوں نے انسانی حقوق کی تنظیموں سے مطالبہ کیا کہ وہ وادی کشمیر میں بھارتی مظالم پر اپنی آواز اٹھائے۔ شرکاء نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ وہ بھارتی ظلم و ستم کے خلاف اپنی آواز اٹھاتے رہیں گے۔ جموں وکشمیر کے تاریخی پس منظر کو بیان کرتے ہوئے سفارتکار توقیر حسین اور سابق سیکرٹری خارجہ ریاض محمد خان نے اقوام متحدہ کی متعدد قراردادوں کا حوالہ دیا لیکن ابھی تک ان پر عمل درآمد نہیں کیا جاسکا۔ دونوں سپیکرز نے اس امر پر زور دیا کہ پاکستان اور بھارت کی حکومتیں بات چیت کے عمل کو دوبارہ شروع کریں۔
اعزاز چوہدری