شہداءکی قربانیوں کے نتیجہ میں کشمیریوں کو جلد آزادی ملے گی: عبدالرحمن مکی

07 نومبر 2017

لاہور (خصوصی نا مہ نگار) جماعة الدعوة سیاسی امور کے سربراہ پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں تحریک آزادی کمزور کرنے کیلئے حریت قائدین کو جیلوں میں ڈالا جارہا ہے۔ شبیر شاہ ودیگر لیڈروں کے بعد یٰسین ملک کو این آئی اے کا نوٹس بھجوانا بھی اسی مذموم منصوبہ بندی کا حصہ ہے۔ شہداءکی قربانیوں کے نتیجہ میں مظلوم کشمیریوں کو جلد آزادی ملے گی۔ بھارت سرکار کی مسئلہ کشمیر پر مذاکرات کا ڈرامہ رچانے کی کوششیں کامیاب نہیں ہوں گی۔ بی جے پی کی سرپرستی میں کشمیر میں ظلم و ستم کی انتہا کر دی گئی ہے۔کشمیری قوم کا تاریخی احتجاج پوری دنیا کیلئے پیغام ہے کہ وہ مقبوضہ کشمیر پر غاصب بھارت کاوجود کسی صورت برداشت کرنے کیلئے تیار نہیں ہے۔کارکنان و ذمہ داران کے مختلف وفود سے گفتگو کرتے ہوئے انہوںنے کہاکہ بھارت سرکار نے سید علی گیلانی سمیت متعدد لیڈروں کو نظربندکر کے ان کی سیاسی سرگرمیوں پر پابندہیںکشمیر ی مسلمان پرعزم ہیں اور تاریخی احتجاج کررہے ہیں۔ بھارت سرکارکشمیری قیادت کو مذاکرات کی دعوت دیکر دنیا کی آنکھوں میں دھول جھونکنے کی کوشش کر رہی ہے۔ حقیقت یہ ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں بی جے پی کی سرپرستی میں نہتے مسلمانوں کی نسل کشی کی جارہی ہے۔آٹھ لاکھ غاصب فوج نے کشمیری مسلمانوں کا جینا دوبھر کر رکھا ہے۔
عبدالرحمن مکی