پاکستان افغانستان میں دہشت گردی کو ہوا دے رہا ہے: کرزئی کا الزام

07 جون 2015

واشنگٹن/ کابل (آئی این پی) بھارت نواز سابق افغان صدرصدر حامد کرزئی نے ایک بار پھر الزام عائد کیا ہے کہ پاکستان افغانستان میں دہشت گردی اور انتہاپسندی کو ہوا دے رہا ہے، پاکستان افغانوں کو بہت دھوکہ دے چکا ہے، اب اسکی فوج اور ایجنسیوں کو دہشت گردی کو فروغ دینے کا کھیل بند کردینا چاہئے۔کابل میںامریکی نشریاتی ادارے کو دیئے گئے انٹرویو میں سابق افغان صدر نے کہا کہ پاکستانی خفیہ ایجنسی افغانستان، بھارت اور دیگر ملکوں میں شدت پسندی کی آگ بھڑکا کر دہشت گردی کو ہوا دیتی ہے۔ پاکستان اور اس کی فوج کو دہشت گردی کی پشت پناہی ترک کرکے افغانستان کے ساتھ ’’مہذب تعلق‘‘ استوار کرنا ہوگا۔ سابق افغان صدر کا کہنا تھا کہ افغانوں کو کسی قوم کے دعووں پر اعتبارنہیں کرنا چاہیے اور اپنے فیصلے خود کرنے چاہئیں۔ افغانوں کو کسی ملک کو یہ موقع نہیں دینا چاہئے کہ وہ افغانستان میں کسی اور ملک کی سرگرمیوں پر انگلی اٹھائے۔ پاکستانیوں کو یہ باور کرانے کی ضرورت ہے کہ انہیں افغانستان میں بھارت کے کام اور اس کی سرگرمیوں پر اعتراض نہیں ہونا چاہئے۔ مائیک مولن نے چند سال قبل کہا تھا کہ حقانی نیٹ ورک پاکستانی خفیہ ایجنسی کا ایک بازو ہے اور اب یہ بیان ایک تسلیم شدہ حقیقت ہے۔ چین افغانستان میں قیام امن کیلئے انتہائی اہم کردار ادا کرسکتا ہے۔