ملالہ یوسفزئی حملہ کیس میں بری ہونے والے 8ملزم بدستور زیرحراست

07 جون 2015
ملالہ یوسفزئی حملہ کیس میں بری ہونے والے 8ملزم بدستور زیرحراست

پشاور+ واشنگٹن (اے ایف پی+ نمائندہ خصوصی) نوبل انعام یافتہ پاکستانی طالبہ ملالہ یوسف زئی پر قاتلانہ حملے کے کیس میں عدالت سے بری کئے جانے والے 8 افراد بدستور دہشت گردی کے دیگر الزامات کے تحت حراست میں ہیں، انہیں رہا نہیں کیا گیا، یہ بات پاکستانی حکام نے اے ایف پی کو بتائی، مینگورہ کے ایک اعلیٰ پولیس افسر کا اصرار تھا کہ عدالت نے کیس کے 10ملزموں کو عمر قید کی سزا سناتے ہوئے جیل بھجوا دیا، 8 کو نہیں چھوڑا گیا، واضح رہے کہ گزشتہ روز میڈیا میں یہ خبریں سامنے آئی تھیں کہ 30 اپریل کو سوات کے انٹرنمنٹ سنٹر میں سماعت کے دوران عدالت نے ملالہ یوسفزئی پر قاتلانہ حملے کے 2مجرموں کو 25,25 سال قید کی سزا سنائی جبکہ 8 ملزموں کو ناکافی شہادتوں پر بری کردیا گیا، دوسری طرف واشنگٹن میں امریکی محکمہ خارجہ کی ترجمان میری ہارف نے کہا کہ ہمیں ملالہ یوسفزئی کیس کے فیصلے کی خبر ملی ہے تاہم اس حوالے سے تفصیلات حاصل کی جارہی ہیں جس کے بعد ہی اس پر ردعمل ظاہر کیا جا سکے گا، انہوں نے کہا کہ امریکہ کا اب بھی وہی موقف ہے کہ ملالہ یوسفزئی پر حملہ کرنے والوں کو قانون کے کٹہرے میں لانا چاہیے اور ان پر مقدمہ چلایا جائے۔

آئین سے زیادتی

چلو ایک دن آئین سے سنگین زیادتی کے ملزم کو بھی چار بار نہیں تو ایک بار سزائے ...