حکومت نے طالبان سے مذاکرات کیلئے کوئی سنجیدہ پالیسی نہیں بنائی: فضل الرحمن

07 جولائی 2013

اسلام آباد (نیشن رپورٹ) جے یو آئی (ف) کے امیر مولانا فضل الرحمن جو حکومت کے اتحادی بھی ہیں، حکومت کے انسداد دہشت گردی کیلئے اقدامات سے عدم اتفاق کرتے ہوئے کہا ہے کہ مسودے میں طالبان سے مذاکرات کیلئے سنجیدہ حکمت عملی کا ذکر نہیں ہے ۔انہوں نے کہاکہ صرف انتظامی اقدامات سے دہشت گردی ختم نہیں ہو گی۔ جے یو آئی (ف) کے ترجمان کے مطابق مولانا فضل الرحمن انسداد دہشت گردی سے متعلق ڈرافٹ پالیسی پر تبصرہ کر رہے تھے۔ ان کا کہنا تھا کہ اے پی سی بلانے کا اقدام خوش آئند ہے اگر جے یو آئی کو دعوت ملتی ہے تو ہم پارلیمنٹ کی مشترکہ قراردادوں اور پچھلی آل پارٹیز کانفرنس کی اتفاق رائے کی روشنی میں سفارشات دیں گے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ کوئی بھی پالیسی اگر جامع نہیں اور صرف نمائشی اقدامات تک محدود ہو گی تو قوم کو دہشت گردی کے بحران سے نکالنے میں ناکامی ہو گی۔